ویانا،ڈپلومیٹک اکیڈمی کے طلباءکا پاکستانی سفارتخانے کا دورہ

ویانا،ڈپلومیٹک اکیڈمی کے طلباءکا پاکستانی سفارتخانے کا دورہ
ویانا،ڈپلومیٹک اکیڈمی کے طلباءکا پاکستانی سفارتخانے کا دورہ

  

ویانا (اکرم باجوہ سے)ڈپلومیٹک اکیڈمی کے طلباء نے ویانا میں پاکستانی سفارتخانے کا دورہ کیا,  ایچ ای  آسٹریا میں پاکستان کے سفیر جناب آفتاب احمد کھوکھر نے طلباء کو جنوبی ایشیا ءکے سیاسی اور معاشی مسائل سے آگاہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق سفیر نے پاکستان کی خارجہ پالیسی کے چیلنجز کے بارے میں جامع معلومات فراہم کیں،   انہوں نے پاکستان کی تمام ممالک کے ساتھ تعمیری اور دوستانہ تعلقات کی خواہش کا اعادہ کیا اور پاک امریکہ تعلقات کی اہمیت کو اجاگر کیا۔

پاکستانی  سفیر نے بھارتی غیر قانونی طور پر مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا بھی ذکر کیا،   انہوں نے کہا کہ کشمیر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا طویل ترین حل طلب ایجنڈا ہے، بھارت کشمیری عوام کے حق خودارادیت سے زبردستی انکار نہیں کر سکتا، بین الاقوامی برادری کو مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو روکنے کے لیے کام کرنا چاہیے۔

 بریفنگ کے بعد سوال و جواب کا سیشن ہوا،   شرکاء کے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے سفیر نے کہا کہ چین کے بی آر آئی اور فلیگ شپ سی پیک منصوبوں کو قرض کے جال کے طور پر غلط تصور کیا گیا ہے،   سی پیک نے درحقیقت پاکستان کی توانائی کی ضروریات کو پورا کرنے میں مدد کی ہے، اس طرح، اقتصادی ترقی اور ترقی میں سہولت فراہم کی ہے۔  ایک اور سوال کے جواب میں سفیر نے یوکرین اور کشمیر کے تنازع سمیت تمام عالمی مسائل پر بین الاقوامی قانون کے یکساں اطلاق پر زور دیا۔

مزید :

بین الاقوامی -