مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں پر تشویش ہے ،پیلٹ گن کا استعمال قبول نہیں :برطانیہ

مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں پر تشویش ہے ،پیلٹ گن کا استعمال ...

لندن (اے این این)برطانیہ نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وادی میں پیلٹ گن کا استعمال قابل قبول نہیں ہے ، تنازعات کا واحد حل پر امن مذاکرات میں ہے ،کشمیری عوام کی خواہشات کا احترام کرنا لازمی ہے۔ان خیالات کا اظہار برطانیہ کی ممکنہ سیکرٹری خارجہ امیلی تھرون بیری نے وزیر اعظم نواز شریف کے کشمیر کے حوالے سے خصوصی وفد کے ساتھ ملاقات میں کیا ہے ۔وزیر عظم کے نمائندگان سینیٹر لیفٹیننٹ جنرل (ر) عبدالقیوم خان اور رکن قومی اسمبلی قیصر احمد شیخ نے لندن میں ان سے ملاقات کی اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم اور وہاں ہونے والی انسانی حقوق کی پامالیوں سے آگاہ کیا۔ انہوں نے مسئلہ کشمیر کو پرامن طریقہ سے حل کرنے کیلئے پاکستان کا عزم ظاہر کیا۔ دونوں نمائندوں نے شیڈو خارجہ سیکرٹری پر زور دیا کہ وہ کشمیر میں بڑے پیمانے پر انسانی حقوق کی خلاف وزیوں کے معاملہ کو دارالعوام میں اٹھائیں اور برطانوی حکومت پر زور دیں کہ وہ کشمیر میں برطانوی اراکین پارلیمنٹ کا حقائق معلوم کرنے والا مشن بھجوائے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان مسلہ کشمیر کا حل پر امن طور پر چاہتا ہے۔برطانیہ کی شیڈو سیکرٹری خارجہ نے کہا کہ انہیں کشمیر میں ہورہی انسانی حقوق کی پامالیوں پر انتہائی تشویش ہے۔وادی میں پیلٹ گن کا استعمال کسی بھی صورت میں نا قابل قبول ہے۔انھوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر سمیت تمام تنازعات کا حل پر امن مذاکرات میں ہے ۔پاکستان اور بھارت کو تمام مسائل بات چیت سے حل کرنے چاہیءں ۔بات چیت میں بھی کشمیری عوام کی خواہشات کا احترام کرنا لازمی ہے۔انہوں نے برطانیہ میں قیام پذیر کشمیری تارکین وطن کی جانب سے کشمیر مسلہ اجاگر کرنے کی ستائش کی۔

برطانیہ

مزید : علاقائی