چارسدہ ،پولیس پر فائرنگ اور جرائم میں مطلوب اشتہاری سرنڈر

چارسدہ ،پولیس پر فائرنگ اور جرائم میں مطلوب اشتہاری سرنڈر

چارسدہ ( بیورورپورٹ) پولیس پر فائرنگ اور دیگر سنگین جرائم میں مطلوب کمسن اشتہاری ملزم نے خود کو پولیس کے حوالے کر دیا۔ گرفتار ملزم نے اپنے اوپر تمام الزامات کو مسترد کرتے ہوئے عدالت سے انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کردیا ۔ تفصیلات کے مطابق پڑانگ سافر خیل سے تعلق رکھنے والے 20سالہ عطاء اللہ عرف عطا گے ولد امان اللہ نے تحریک انصاف کے ضلعی رہنما عابد خان کے ذریعے خود کو پڑانگ پولیس کے حوالے کرکے مقدمات کا سامنا کرنے اور عدالت سے انصاف طلب کی ۔ گرفتاری دینے سے پہلے چارسدہ پریس چیمبر میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے عطاء اللہ نے کہا کہ بے شک پولیس اور عوام کے نظروں میں وہ خطرناک مجرم ہیں مگر حقیقت یہ ہے کہ پولیس پر فائرنگ سمیت مجھ پر لگائے گئے تمام الزامات جھوٹ کا پلندہ ہے ۔ میرے بے گناہ بھائی عبداللہ کو بھی پولیس پر فائرنگ کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا اور نا کردہ گناہ کے پاداش میں ایک سال تک جیل کی صعوبت کاٹنے کے بعد رہا ئی ملی ۔ اس موقع پر تحریک انصاف کے رہنما عابد خان نے ڈی پی او چارسدہ سہیل خالد کو جرائم پیشہ عناصر کی سرکوبی پر حراج تحسین پیش کیااور کہا کہ موصوف کے دور میں قانون کی بالادستی قائم ہوئی ہے ۔اُنہوں نے تمام اشتہاریوں سے اپیل کی کہ از خود پولیس کو گرفتاری دیں اور عدالتوں کا سامنا کریں ۔ اس حوالے سے ڈی پی او چارسدہ مکمل تعاون کریں گے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...