چارسدہ میں سپیشل فورس کے اہلکار کو بے دردی سے قتل کردیا گیا

چارسدہ میں سپیشل فورس کے اہلکار کو بے دردی سے قتل کردیا گیا

چارسدہ ( بیورورپورٹ)سردریاب میں نامعلوم دہشت گردوں نے سپیشل برانچ پولیس کے سب انسپکٹر کو بیوی اور کم سن بچوں کے سامنے شہید کر دیا ۔ ملزمان فرار ہونے میں کامیاب ۔ شہید کو آبائی قبر ستان میں پورے سرکاری اعزاز کے ساتھ سپر د خاک کیا گیا ۔نما زجنازہ میں پولیس آفسران کی شرکت ۔ دفعہ 144اور موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی کے باوجود پولیس آفسر کی شہادت سوالیہ نشان بن گیا ۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ سٹی چارسدہ کے حدود سردریاب میں نامعلوم دہشت گردوں نے سپیشل برانچ پولیس کے سب انسپکٹر اکبر خان ولد عجب خان کو کم سن بیٹیوں اور بیوی کے سامنے فائرنگ کرکے شہید کر دیا ۔ پولیس ذرائع کے مطابق شہید پولیس آفسر گھر سے ڈیوٹی کیلئے پشاور جا رہے تھے جب کہ اس کی بیوی اور بچیاں سکول جا رہی تھی کہ راستے میں موٹر سائیکل پر سوار دہشت گردوں نے فائرنگ کرکے شہید کر دیا ۔ واقع کے بعد شہید کی میت کو پوسٹ مارٹم اور قانونی کاروائی کیلئے چارسدہ ہسپتال منتقل کیا گیا ۔ بعد ازاں شہید کو پورے سرکاری اعزاز کے ساتھ آبائی قبر ستان میں سپر دخاک کیا گیا ۔نماز جنازہ میں ڈی پی او چارسدہ ، تمام سرکل ڈی ایس پیز ، پولیس اہلکاروں اور سپیشل برانچ پولیس کے افسران نے شرکت کی ۔نماز جنازہ کے بعد پولیس کے چاق وچوبند دستے نے شہید کی میت کو سلامی دی اور پھولوں کی چادریں چڑھائی ۔عوامی حلقوں نے انسداد پولیو مہم کیلئے نافذ دفعہ 144اور موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی کے باوجود پولیس افسر پر موٹر سائیکل سواردہشت گردوں کی طرف سے دن دہاڑے فائرنگ کو سٹی پولیس کی ناکامی قرار دیا ۔ دریں اثنا تنگی کے مقامی قبرستان سے عابد نامی نوجوان کی نعش برآمد ہوئی جس کو نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے قتل کیا تھا ۔

مزید : پشاورصفحہ اول