انسداد دہشت گردی کی عدالت نے واپڈ ا کے ڈائریکٹر کے قاتل کو مجموعی طور پر 35سال قید کی سزا کا حکم سنا دیا

انسداد دہشت گردی کی عدالت نے واپڈ ا کے ڈائریکٹر کے قاتل کو مجموعی طور پر 35سال ...
انسداد دہشت گردی کی عدالت نے واپڈ ا کے ڈائریکٹر کے قاتل کو مجموعی طور پر 35سال قید کی سزا کا حکم سنا دیا

  

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت نے واپڈ ا کے ڈائریکٹر کے قتل کے مقدمہ میں ملوث مجرم کو مجموعی طور پر 35سال قید کی سزا کا حکم سنا دیاہے۔انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج عاقب نذیر نے کیس کی سماعت کی، ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل رﺅف وٹو نے عدالت تو بتایا کہ مجرم اقبال انصاری نے 2000ءمیں تبادلہ کرنے پر ڈائریکٹر واپڈا جلیل ابرار کو قتل کردیا تھا، انسداددہشت گردی کی عدالت نے 2006 میں جرم ثابت ہونے پر مجرم کو موت کی سزا سنائی تھی، مجرم کا ذہنی توازن خراب ہونے کی وجہ سے عدالت عظمی سے رجوع کیا گیا، عدالت عظمی سے استدعا کی گئی تھی کہ قانون کے مطابق خراب ذہنی توازن کی بنا پر مجرم کو موت کی سزا نہیں دی جاسکتی جس پر سپریم کورٹ نے 2016 ءمیں یہ کیس واپس انسداددہشت گردی کی عدالت کے بھجوادیا، مجرم کے ذہنی معائنے کے لئے پنجاب میڈیکل بورڈ کی جانب سے میڈیکل بورڈ تشکیل دیا گیا جس نے اپنی رپورٹ اے ٹی سی میں پیش کی ،ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل رﺅف وٹو کی جانب مجرم کو قانون کے مطابق سزا دینے کی استدعا کی گئی، دلائل مکمل ہونے پر عدالت نے فیصلہ سناتے ہوئے مجرم کو مجموعی طور پر 35سال قید کی سزا سنائی، مذکورہ مجرم کے خلاف تھانہ سول لائنز پولیس نے مقدمہ درج کیا تھا۔

مزید : لاہور