انتقال کرجانیوالی خاتون پروفیسر کے واجبات کی ادائیگی کیلئے چیف سیکرٹری کو ریکارڈ پیش کرنے کا حکم

انتقال کرجانیوالی خاتون پروفیسر کے واجبات کی ادائیگی کیلئے چیف سیکرٹری کو ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے ترقی کے انتظار میں فوت ہونے والی پروفیسر کے واجبات کی ادائیگی کیلئے دائر درخواست میں چیف سیکرٹری پنجاب کو ایک ماہ میں کیس کی مکمل تفصیلات اور ریکارڈ پیش کرنے کا حکم دیا ہے ۔مسز جسٹس عائشہ اے ملک نے خاتون کے بھائی طاہر مسعود ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی، کیس کی سماعت شروع ہوئی تو سرکاری وکیل نے درخواست کی کہ ریکارڈ فراہم کرنے کے لیے مہلت دی جائے جس پر فاضل عدالت نے ریمارکس دیئے کہ کیس میں پہلے ہی تاخیر ہوچکی ہے اور مرحومہ کے ساتھ ناانصافی ہوئی ہے، اب چیف سیکرٹری کیس کی مکمل تفصیلات اور ریکارڈ ایک ماہ میں عدالت کے روبرو پیش کریں، درخواست گزار وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پروفیسر ممتاز مسرت چودھری ترقی کا انتظار کرتے 2013 ء میں وفات پاگئیں، مرحومہ کو 2002ء سے ترقی دی جانا تھی لیکن نہ تو مرحومہ کو ترقی دی گئی اور نہ ہی اب واجبات ادا کیے گئے ہیں، درخواست گزار وکیل نے کہا کہ مرحومہ پروفیسر مسرت چودھری ترقی کے لیے محکموں کے چکر لگاتی رہیں اور اس دوران پروفیسر مسرت چودھری انتقال کر گئیں، قانون کے مطابق ان کو ترقی جانا ان کا حق ہے، انہوں نے استدعا کی کہ عدالت چیف سیکرٹری اور دیگر متعلقہ حکام کو پروفیسر مسرت چودھری کو ترقی دینے کے احکامات جاری کئے جائیں اور تمام واجبات ادا کرنے کے بھی احکامات دیئے جائیں۔
واجبات

مزید :

علاقائی -