ایمرسن کالج میں ایوننگ کلاسز کی منظوری نہ ہونے سے غریب طلبہ پریشان

  ایمرسن کالج میں ایوننگ کلاسز کی منظوری نہ ہونے سے غریب طلبہ پریشان

  



ملتان ( سٹاف رپورٹر ) بہاالدین زکریا یونیورسٹی اکیڈمک کونسل کی طرف سے گورنمنٹ ایمرسن کالج میں ایوننگ کلاسز کی منظوری نہ دئیے جانے پر طلبا وطالبات سراپا احتجاج بن گئے‘ پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے ساتھ ملی بھگت قرار دے دیا۔ بتایا گیا ہے کہ بہاالدین زکریا یونیورسٹی اکیڈمک کونسل کے(بقیہ نمبر28صفحہ12پر )

اجلاس میں گورنمنٹ ایمرسن پوسٹ گریجویٹ کالج کے8شعبوں میں ایوننگ کلاسز کی منظوری نہیں دی گئی جس پر امید لگائے طلبا وطالبات میں مایو سی اور تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے جنہوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ گورنمنٹ ایمرسن کالج میںبی ایس و دیگر پروگرامز کی سمسٹر فیس صرف4ہزار روپے ہے جبکہ پرائیویٹ تعلیمی ادارے فی سمسٹر 50ہزار روپے سے 70ہزار روپے تک وصو ل کر رہے ہیں ‘ ایسے مجبور طلبا وطالبات جو کسی وجہ سے دن کی کلاسز اٹینڈ نہیں کر سکتے وہ شام کی کلاسز اٹینڈ کرکے اپنا مستقبل سنوار سکتے ہیں‘ لاہور کے کالجز میں ایوننگ کلاسز ہو رہی ہیں اور ایچ ای ڈی کی طرف سے ایمرسن کالج ملتان کو بھی لیٹر لکھا گیا ہے کہ یہاں بھی ایوننگ کلاسز شروع کی جائیں مگر چونکہ بہاالدین زکریا یونیورسٹی کے مختلف پروفیسرز نجی تعلیمی اداروں میں بھی پڑھا رہے ہیں اور وہاں سے بھی تنخواہیں و مراعات لے رہے ہیں ‘ اس لئے وہ ایمرسن کالج میں ایوننگ کلاسز کے مخالف ہیں اور انہوں نے غریب طلباو طالبات کے مفاد کے اس عظیم منصوبے کی منظوری نہیں دی ‘ متاثرہ غریب طلبا وطالبات نے وزیر اعلی ٰ پنجاب سے مطالبہ کیا ہے کہ اس صورتحال کا نوٹس لیاجائے اور ایمرسن کالج سمیت دیگر اعلی ٰ تعلیمی اداروں میں بھی ایوننگ کلاسز شروع کی جائیں اور دادرسی کی جائے ۔

ایمرسن کالج

مزید : ملتان صفحہ آخر