آشیانہ ہاؤسنگ کیس کی سماعت 12نومبر پر ملتوی،مزید گواہ طلب

آشیانہ ہاؤسنگ کیس کی سماعت 12نومبر پر ملتوی،مزید گواہ طلب

  



لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج امجد نذیرچودھری نے آشیانہ اقبال سکینڈل کیس کی سماعت12نومبر تک ملتوی کرتے ہوئے مزید گواہوں کو طلب کرلیاہے۔دوران سماعت فاضل جج نے میاں شہباز شریف کو حاضری لگانے کے فورا بعد عدالت سے جانے اجازت دینے کی زبانی استدعا مسترد کر دی تاہم بعدازاں تحریری درخواست پرانہیں عدالتی کارروائی ختم ہونے سے پہلے جانے کی اجازت دے دی گئی،کیس کی سماعت شرو ع ہوئی تو میاں شہباز شریف کے وکیل نے کہا کہ میاں شہباز شریف جوڈیشل کمپلیکس پہنچ گئے ہیں،وہ کمر درد کے باعث سیڑھیاں نہیں چڑھ سکتے، عدالت سے استدعا ہے کہ آج کی عدالتی حاضری سے انہیں استثنیٰ دیا جائے، جس پر فاضل جج نے کہا کہ انہیں کہیں آہستہ آہستہ سیڑھیاں چڑھ کر آ جائیں،میاں شہباز شریف نے پیش ہوکرکہاکہ وہ بڑی مشکل سے سیڑھیاں چڑھ کرآئے ہیں، ڈاکٹروں نے مجھے کہا ہے کہ کمر کا خیال رکھیں کوئی جھٹکا نہ لگے، حاضر ی لگاکر جانے کی اجازت دی جائے۔فاضل جج نے شہباز شریف سے کہا کہ میاں صاحب آپ بیٹھ جائیں، آپ کے کھڑے ہونے کی ضرورت نہیں،فاضل جج نے شہباز شریف کے وکیل سے کہا کہ اگرایسا ہوتا رہا تو پھر میں جرمانے کرنا شروع کردوں گا،وکیل نے کہا نواز شریف کی زندگی اور موت کا معاملہ ہے،انہوں نے اپنے بھائی سے ملنے جانا ہے،ابھی11بج گئے ہیں،باقی دن کے لئے شہباز شریف کی حاضری معاف کی جائے جس پر فاضل جج نے شہباز شریف کی باقی دن کی حاضری معاف کردی،عدالت میں مزیدتین گواہوں نے اپنے بیانات قلمبند کروائے۔

آشیانہ ہاؤسنگ

مزید : صفحہ آخر