مرید عباس قتل کیس، عد الت میں ملزمان  پر تاخیری حربے استعمال کرنے کا الزام

مرید عباس قتل کیس، عد الت میں ملزمان  پر تاخیری حربے استعمال کرنے کا الزام

  



کراچی (آ ئی این پی)اینکر مرید عباس سمیت دوافراد کے قتل کیس میں انسداددہشتگردی کی دفعات ختم کرنے کیخلاف دائر درخواست پر عدالت نے فریقین سے 29 نومبر تک جواب طلب کرلیا ہے،تفصیلات کے مطابق  جمعرات کے روز سندھ ہائیکورٹ میں نجی ٹی وی کے اینکر مرید عباس سمیت دوافراد کے قتل کیس میں انسداددہشتگردی کی دفعات ختم کرنے کیخلاف مرید عباس کی بیوہ زارا عباس کی درخواست کی سماعت ہوئی، ملزمان کی جانب سے نئے وکیل فرید احمد دائیو نے وکالت نامہ جمع کرایا، ملزمان وکیل کا کہنا تھا درخواست کی کاپی موصول نہیں ہوئی درخواست کا جائزہ لینے کے بعد ہی جواب جمع داخل کراسکوں گا،دوران سماعت زاراعباس کے وکیل نے الزام عائد کیا کہ ملزمان عاطف زمان اور عادل زمان کی جانب سے کیس کو التوا کا شکار کرنے کیلئے تاخیری حربے استعمال کیے جارہے ہیں،وکیل وقار عباسی ایڈووکیٹ کا کہنا تھا کہ یہ دہرے قتل کا کیس ہے جسے جان بوجھ کرلٹکایا جارہا ہے،بعد ازاں عدالت نے فریقین سے 29نومبر کو جواب طلب کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

مرید عباس قتل کیس

مزید : صفحہ آخر