تمام سرکاری مشینری ہمارے خلاف استعمال ہورہی ہے،نثار مہمند

  تمام سرکاری مشینری ہمارے خلاف استعمال ہورہی ہے،نثار مہمند

  



مہمند (نمائندہ پاکستان)ضلع مہمند میں تمام سرکاری مشینری ہمارے خلاف استعمال ہو رہی ہے۔ کارکنوں کی تصادم کی صورت میں ذمہ داری حکومت پر ہوگی۔ روزانہ کی بنیاد پر ہمیں دھمکی دی جاتی ہے۔ نیپرائیٹ سمگلنگ میں سرکاری اہلکار ملوث ہیں۔ ایم این اے نے مہمند ڈیم کی زمین کو سستے ترین ریٹ پر دیکر قوم کا نقصان کیا ہے۔ 28 اکتوبر کو قومی مسائل پر گرینڈ جرگہ طلب کیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار عوامی نیشنل پارٹی ضلع مہمند کے صدر و صوبائی اسمبلی PK-193 سے منتخب ممبر نثار خان مہمند نے مہمند پریس کلب میں پریس کانفرنس کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ ضلع مہمند کی تمام سرکاری مشینری ہمارے خلاف استعمال ہو رہی ہے۔ کیونکہ اے ڈی پی میں ایم این اے کا کوئی کردار نہیں مگر پھر بھی وہ اس میں بار بار مداخلت کرتے ہیں۔ مہمند ڈیم میں قوم کی زمین کو سستے ترین ریٹ پر دیکر قوم کا نقصان کیا ہے اور اب وہ تمام تر ذمہ داری قوم پر ڈال رہے ہیں۔ حالانکہ مہمند ڈیم میں ہمارے ساتھ جو وعدے کئے گئے تھے اُس میں ایک بھی پورا نہیں کیا گیا ہے۔ اور ڈیم سے ہمارا 8500 ایکڑ زمین متاثر ہو جاتا ہے۔ حکومت ہمارا نہیں سن رہا ہے۔ مجبوراً ہم عوام کو سڑکوں پر کر احتجاج کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ انہوں نے کہا کہ 1951 ء میں ضلع مہمند کے جو حدود تھے اُن کا ثبوت ہمیں چاہئے۔ کیڈٹ کالج، ورسک ڈیم کی رائلٹی، پاک افغان تجارتی شاہراہ، معدنیات پر بیرونی لوگوں کا قبضہ، مہمند کے لوگوں کے بلاک شناختی کارڈز و دیگر مشکلات کے حل کیلئے 28 اکتوبر کو ہم یکہ غنڈ کے مقام پر ایک عظیم الشان جرگہ کرینگے۔ جس میں تمام اقوام کے مشران کو شرکت کی دعوت دی جاتی ہے۔ جس میں آئندہ کیلئے لائحہ عمل کا اعلان کرینگے۔ انہوں نے کہا کہ ہم کو روزانہ کی بنیاد پر قسم قسم کی دھمکیاں دی جارہی ہے۔ اگر کارکنوں کے درمیان تصادم ہوا تو اس کی تمام تر ذمہ داری حکومت پر ہوگی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر