”میں نے ایک سال پہلے ہی کہہ دیا تھا کہ اورنج ٹرین اس وقت چلائی جائے گی جب ۔۔“سینئر صحافی کا وہ دعویٰ جسے حکومت نے سچ کر دکھایا 

”میں نے ایک سال پہلے ہی کہہ دیا تھا کہ اورنج ٹرین اس وقت چلائی جائے گی جب ...
”میں نے ایک سال پہلے ہی کہہ دیا تھا کہ اورنج ٹرین اس وقت چلائی جائے گی جب ۔۔“سینئر صحافی کا وہ دعویٰ جسے حکومت نے سچ کر دکھایا 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور کی اورنج ٹرین کا منصوبہ مکمل ہو گیاہے جس کا آج وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار افتتاح بھی کر دیا ہے لیکن اس سے پہلے ہی ن لیگ کے سینئر رہنما سعد رفیق اور دیگر شخصیات پہنچیں اور افتتاح کر ڈالا تاہم اب اس معاملے پر صحافی رضوان رضی بھی بول پڑے ہیں اور حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنا ڈالا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی رضوان رضی نے ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ ”ایک سال سے کچھ زائد ماہ ہوتے ہیں کہ عرض کیا تھا کہ جب تک پشاور کی بی آر ٹی نہیں چل جاتی تب تک لاہور کی اورنج ٹرین، مکمل ہو جانے کے باوجود، نہیں چلنے دی جائے گی۔پی ٹی آئی اوراسکے سرپرستوں کا شکریہ کہ انہوں نے خاکسار کو سچا ثابت کیا۔“

ان کا مزید کہناتھا کہ ”یہ بھی تو فطرت کا انتقام ہے کہ جس اورینج ٹرین کے خلاف چار سال جھوٹا پراپیگنڈہ اور بکواسیات کیں، ریفرنس دائر کئے، تاخیری حربے استعمال کئے، آج اس کا افتتاح انہی کے ہاتھوں کروایا جا رہا ہے۔ یہ ہے فطرت کا انتقام، مگر انسان اپنی کم عقلی اور عصبیت اور تعصب کے باعث سمجھتا نہیں۔“

یاد رہے کہ پشاور کی بی آر ٹی کا کردیا گیا تھا اور وہ سڑکوں پر رواں دواں تھی لیکن بسوں میں آتشزدگی کے واقعات کے بعد اسے 39 روز قبل بند کر دیا گیا تھا تاہم مرمت اور دیگر مسائل کو دور کرنے کے بعد گزشتہ روز اسے دوبارہ بحال کیا گیاہے ۔ترجمان ٹرانس پشاور محمد عمیر نے بی آر ٹی سروس بحال کرتے ہوئے بتایا کہ تمام بسوں کی جامع تحقیقات، نئے آلات کی تنصیب، لوڈ اور روڈ ٹیسٹینگ کی گئی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ بی آر ٹی سروس صبح 6 سے رات 10 بجے تک چلے گی، مرکزی راہداری پر ایکسپریس روٹ بھی فعال کر دیا گیا ہے، خیبر بازار سے مال آف حیات آباد تک خصوصی روٹ چلایا جائےگا۔

مزید :

قومی -