حکومت احتساب کے نام پر لوگوں کی تذلیل کرنا چاہتی ہے،ملک کا آئین توڑنے والوں کا بھی احتساب ہوناچاہیے،شاہ اویس نورانی 

حکومت احتساب کے نام پر لوگوں کی تذلیل کرنا چاہتی ہے،ملک کا آئین توڑنے والوں ...
حکومت احتساب کے نام پر لوگوں کی تذلیل کرنا چاہتی ہے،ملک کا آئین توڑنے والوں کا بھی احتساب ہوناچاہیے،شاہ اویس نورانی 

  

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)رہنماجمعیت علمائے پاکستان شاہ اویس نورانی نے کہاکہ حکومت احتساب کے نام پر لوگوں کی تذلیل کرنا چاہتی ہے،ایسے احتساب کے عمل کو جوتے کی نوک پر رکھتے ہیں،آئین روندنے والوں کا بھی احتساب ہونا چاہیے،ملک کا آئین توڑنے والوں کا بھی احتساب ہوناچاہیے۔

شاہ اویس نورانی نے پی ڈی ایم جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ احتساب کے نام پر انتقام لیا جارہاہے،کیا احتساب صرف آصف زرداری ،نوازشریف اورمولانا فضل الرحمن کا ہوگا،احتساب صرف اپوزیشن کا نہیں ہوناچاہئے،صرف اپوزیشن کیلئے احتساب کے عمل کو نہیں مانتے ،آنے والا وقت پاکستان کے عوام کا ہے،حکومت احتساب کے نام پر لوگوں کی تذلیل کرنا چاہتی ہے،ایسے احتساب کے عمل کو جوتے کی نوک پر رکھتے ہیں،آئین روندنے والوں کا بھی احتساب ہونا چاہیے،ملک کا آئین توڑنے والوں کا بھی احتساب ہوناچاہیے۔

انہوں نے کہاکہ تحریک کامقصد چوروں،لٹیروں،غاصبوں سے نجات دلاناہے،پی ڈی ایم کامقصد عوام کو حق حکمرانی دلانا ہے ، انہیں منصب سے اتار کر 22کروڑ عوام کے درمیان چھوڑناہے،بلوچستان کو ہر حکومت میں پیکیج دیاجاتاہے،پیکیج ایسے دیتے ہیں کہ ہم اور آپ بھکاری ہوں،آئندہ حکومت میں بلوچستان کا پیکج عوام تک پہنچے گا،شاہ اویس نورانی نے کہاکہ آنےوالا سال الیکشن کا ہوگا اور یہ اپنے گھر جائیں گے،جتنے بھی الیکشن ہوئے اس میں من پسند نمائندوں کو لایاگیا۔

مزید :

قومی -علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -