مردانہ کمزوری کے علاج کیلئے بندروں کے خام خلیے استعمال کیے جانے کا امکان 

مردانہ کمزوری کے علاج کیلئے بندروں کے خام خلیے استعمال کیے جانے کا امکان 
مردانہ کمزوری کے علاج کیلئے بندروں کے خام خلیے استعمال کیے جانے کا امکان 

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) بانجھ پن کے شکار مردوں کو یونیورسٹی آج جارجیا کے سائنسدانوں نے ایک نئی امید دلا دی ہے جنہوں نے بندروں کے جنسی خلیوں کی مدد سے مردوں میں سپرمز پیدا کرنے کی ایسی تکنیک تیار کر لی ہے کہ سن کر آپ دنگ رہ جائیں گے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس تکنیک میں سائنسدانوں نے کامیابی کے ساتھ بندروں کے جنینیاتی خام خلیوں (Embryonic Stem Cells)کی مدد سے سپرم سیلز تیار کیے ہیں جو مکمل طور پر فنکشنل تھے۔

تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ چارلس ایزلے کا کہنا ہے کہ ”ہم نے اس تحقیق میں جنینیاتی خام خلیوں سے جو سپرمز تیار کیے، انہوں نے مادہ بندروں کے بیضوں سے کامیابی سے ملاپ کیا اور ان سے ایمبریو بھی بن گئے۔ اس تحقیق کی کامیابی سے امید پیدا ہوئی ہے کہ ہم مردوں کے غیرمتشکل جنینیاتی خلیوں سے ان کے سپرمز تیار کر سکتے ہیں جس سے ان کے ہاں اولاد کا حصول ممکن ہو جائے گا۔ “ واضح رہے کہ ماضی میں سائنسدانوں چوہوں پر بھی یہ کامیاب تجربہ کر چکے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -