پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ قبول نہیں: ایف پی سی سی آئی

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ قبول نہیں: ایف پی سی سی آئی

  



لاہور (کامرس رپورٹر) فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامر س اینڈ انڈسٹری کے ریجنل چیئرمین شیخ عبدالوحید صندل اور نا ئب صدر اظہر مجید شیخ نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوںمیں ہو نے والے حالیہ اضافے پر اپنے شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اس کو صنعت وتجارت اور عام آدمی کیلئے ڈرون حملہ قرار دیاہے اور کہا ہے کہ عالمی مارکیٹ میں کروڈ آئل کی قیموں میں5سے 6ڈالر کی کمی ہوئی ہے جبکہ پاکستان پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہر آئے دن اضافہ کیا رہا ہے جو ملک میں غذائی اور صنعتی بحران پیدا کرنے کا باعث بن رہا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ آئے روز پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ سمجھ سے بالا تر ہے ۔ پیداواری لاگت میں اضافہ کے با عث پاکستان عالمی مارکیٹ میں مقابلہ کی صلاحیت کھوتا جا رہا ہے ۔بیرون ِ ملک منتقل ہو تے ہوئے سرمائے کو روکنے کی پالیسی تشکیل دینے کی بجائے حکومت بز نس کش پالیسی اپنا ئے ہوئے ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ایک رپورٹ کے مطابق حکومت اس وقت ایک لیٹر پر 30سے 40روپے کامنافع لے رہی ہے جبکہ عوام کو انتہائی مہنگے داموں فروخت کر رہی ہے ۔ حکومت منافع خوری کی پالیسی ترک کرتے ہوئے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوںمیں گزشتہ دو ماہ کے دوران ہونے والے اضافہ فوری طور پر واپس لے ۔مزید براں ان کا کہنا تھا کہ ہر ہفتے پٹرولیم مصنوعات کے تعین کے با عث عوامی مشکلا ت میں شدید اضافہ ہو ا ہے اس پالیسی کو واپس لیا جائے ۔

مزید : کامرس


loading...