”عظمت رحمت اللعالمینﷺ کانفرنس“کے موقع پر مشترکہ اعلامیہ

”عظمت رحمت اللعالمینﷺ کانفرنس“کے موقع پر مشترکہ اعلامیہ

  



لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمدشہبازشریف کی زیرصدارت عظمت رحمت اللعالمینﷺکانفرنس میں درج ذیل مشترکہ اعلامیہ کی متفقہ طور پر منظوری دی گئی۔ صوبائی وزیراوقاف حاجی احسان الدین قریشی نے مشترکہ اعلامیہ پیش کیا۔"عظمت رحمت اللعالمین ﷺکانفرنس کے موقع پر پاکستان کے تمام مکاتب فکر کے علماءکرام اور مشائخ اسلام کا یہ نمائندہ اجتماع رسول اکرمﷺ کی حرمت کے منافی فلم کی تیاری پر شدید غم و غصہ اور گہرے رنج و غم کا اظہار کرتا ہے۔ ہم تمام شرکائے کانفرنس اس امر پر متفق ہیں کہ یہ ناپاک جسارت اسلام دشمن قوتوں کی طرف سے دنیا بھر میں بسنے والے تقریباً دو ارب مسلمانوں کے خلاف ایک کھلے چیلنج کی حیثیت رکھتی ہے۔ ہم شرکائے کانفرنس اسلام دشمن عناصر کی اس مذموم کوشش کے خلاف پوری طرح متحد اور متفق ہیں۔ہم اس فلم کے خلاف حکومت پنجاب کے موقف سے متفق ہیں اور وفاقی حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ دنیا کی عظیم اسلامی مملکت کی حکومت کی حیثیت میں اس نازک موقع پر اپنا مطلوبہ کردار ادا کرے۔ ہم وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف کے اس مطالبے کی تائید کرتے ہیں کہ وفاقی حکومت اس فلم کے خلاف متفقہ لائحہ عمل تیار کرنے کے لئے اسلام آباد میں موجود مسلم ممالک کے سفیران کرام کا فوری طور پر اجلاس بلائے اور ان سے مدینہ منورہ میں او آئی سی (OIC) کا ہنگامی اجلاس بلانے کی تائید حاصل کرے۔ اجلاس میں وفاقی حکومت سے مزید مطالبہ کیا کہ وہ اقوام متحدہ سے رابطہ کرکے عالمی سطح پر مذاہب اور انبیاءکرام کی شان میں گستاخی کو جرم قرار دلوانے کے لئے سفارتی اقدامات کرے۔عظمت رحمت اللعالمین کانفرنس کے شرکائ‘ تمام مکاتب فکر کے علماءکرام‘ خطباءاور ذاکرین سے درخواست کرتے ہیں کہ عالم اسلام کو درپیش چیلنجز کے پیش نظر وہ اپنے خطبات میں عوام سے اسلام دشمن عناصر کے خلاف اتحاد و یگانگت پیدا کرنے‘ میانہ روی اور مثبت رویہ اختیار کرنے کی اپیل کریں اور مذکورہ گستاخانہ فلم کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے توڑ پھوڑ‘ تشدد اور ہنگامہ آرائی سے گریز کرنے کی تلقین کریں تاکہ اسلام اور پاکستان کے دشمن عناصرملک میں افراتفری کے ذریعے اپنے مذموم عزائم میں کامیاب نہ ہو سکیں۔مشکل کی اس گھڑی میں ہم صبر‘ حوصلے اور تدبر کا مظاہرہ کرتے ہوئے وطن عزیز کو امن و سلامتی کا گہوارہ بنا کر اسے مضبوط اور مستحکم کرنے کا عزم کرتے ہیں۔ خدائے بزرگ و برتر سے دعا ہے کہ وہ ہمیں پیغمبرﷺ کی حرمت کے تحفظ کے لئے ہر طرح کی قربانی دینے اور اسلام دشمن عناصر کے خلاف متحد رہنے کی توفیق عطا فرمائے"۔

مزید : صفحہ اول