عدالتی احکامات پر سوال، الیکشن کمیشن خود مختار ادارہ ہے : اٹارنی جنرل کا فخرالدین جی ابراہیم کو خط

عدالتی احکامات پر سوال، الیکشن کمیشن خود مختار ادارہ ہے : اٹارنی جنرل کا ...
عدالتی احکامات پر سوال، الیکشن کمیشن خود مختار ادارہ ہے : اٹارنی جنرل کا فخرالدین جی ابراہیم کو خط

  



 اسلا م آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) اٹارنی جنرل عرفان قادر نے عدالتی احکامات پر سوال اُٹھاتے ہوئے چیف الیکشن کمشنر کو آئین سے وفاداری کا درس دیاہے اور بتایاہے کہ اراکین پارلیمنٹ کو اہلیت سے متعلق تن تنہا الیکشن کمیشن کو فیصلہ کرنے کا اختیار حاصل ہے ۔ اٹارنی جنرل عرفان قادر کی طرف سے بطورچیف لاءآفیسر الیکشن کمیشن کو لکھاگیاخط الیکشن کمیشن کو موصول ہوگیاہے ۔ دوصفحات پر مشتمل خط میں اٹارنی جنرل نے کہاکہ ہے کہ الیکشن کمیشن ایک آزاد،خودمختار ادارہ ہے ، کسی امید وار کی اہلیت جانچنے کا اختیاربلاشرکت غیر ے الیکشن کمیشن کو حاصل ہے ۔اُنہوں نے کہاکہ سپریم کورٹ کو الیکشن کمیشن کو ہدایات جاری کرنے کا اختیار نہیں ، چیف الیکشن کمشنرفخرالدین جی ابراہیم اراکین پارلیمنٹ کی اہلیت سے متعلق کوئی فیصلہ کرنے سے قبل یہ فیصلہ کرلیں کہ کوئی عدالت الیکشن کمیشن کو ہدایات جاری کرنے کا آئینی مینڈیٹ رکھتی ہے یا نہیں ؟ آئین کے آرٹیکل پانچ کا حوالہ دیتے ہوئے اُنہوں نے کہاکہ الیکشن کمیشن آزاد انہ فیصلے کرتاہے اور آئین کے تحت عوامی عہدے پر فائز شخص کو آئین کا پابندرہناہے ۔الیکشن کمیشن نے خط کے موصول ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایاکہ آئندہ اجلاس میں اٹارنی جنرل کے خط کا جائزہ لیاجائے گا۔

مزید : اسلام آباد


loading...