صوبوں کا بٹوارہ ہوا تو قومی یکجہتی کا کباڑہ ہو جائے گا،اشرفبھٹی

صوبوں کا بٹوارہ ہوا تو قومی یکجہتی کا کباڑہ ہو جائے گا،اشرفبھٹی

  

 لاہور(پ ر )پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما ءمحمد اشرف بھٹی نے کہا ہے کہ مخصوص عناصر نے نیاصوبہ بنانے کاشوشہ چھوڑا، تاہم ابھی ایساکرنے کی قطعاً ضرورت نہیںہے۔یہ توڑنے نہیں جوڑنے کاوقت ہے،اگربٹوارہ ہوا تو قومی یکجہتی کاکباڑا ہوجائے گاصوبائی خودمختاری یقینی بنانے سے مختلف طبقات کی محرومیاں دورکی جاسکتی ہیںپاکستان کیلئے پارلیمانی جمہوری نظام سے بہترکوئی نظام نہیں ہوسکتاملک میں نظام حکومت کے سلسلہ میں کوئی نیا تجربہ کرنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی عوام سے اپنے نمائندے منتخب کرنے کاحق نہیں چھینا جاسکتااحتساب کاراستہ بھی شفاف انتخاب سے ہوکرجاتا ہے وہ بلھے شاہ روڈ پرایک تقریب سے خطاب کررہے تھے محمداشرف بھٹی نے مزید کہا کہ ٹیکنوکریٹس اپنے کام سے کام رکھیں ،امورمملکت انجام دینا سیاستدانوں کاکام ہے پارلیمانی جمہوری نظام کے ناکام ہونے کاتاثرہرگزدرست نہیںہے انہوں نے کہا کہ دھرنوں سے قومی معیشت پرمنفی اثرپڑرہا ہے ،عمران خان سیاسی سنجیدگی کامظاہرہ کرنے میں ناکام رہے دھرنے والے اپنے ایجنڈے کی بنیادپرعوام کواپناحامی بنانے میں ناکام رہے انہوں نے کہاکہ وفاقی حکومت کراچی میں قیام امن اورمعاشی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے سندھ حکومت کی بھرپورمددکرے قومی معیشت اورشہرقائدؒ کے امن کاآپس میں بہت گہرا تعلق ہے انہوں نے کہا کہ کراچی کواندھیروں اور انگاروں کے سپردکرکے پاکستان روشن اورپرامن نہیں رہ سکتا ۔کراچی کی روشنی اوررونق بحال ہونے تک پاکستان معاشی طورپرٹیک آف نہیں کرسکتا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -