2020ء تک حلال خوراک کی مصنوعات کا عالمی حجم 6.4 کھرب ڈالر تک بڑھنے کی توقع

2020ء تک حلال خوراک کی مصنوعات کا عالمی حجم 6.4 کھرب ڈالر تک بڑھنے کی توقع

الاہور(کامرس رپورٹر)2012ء کے اختتام تک حلال خوراک کی مصنوعات کی عالمی تجارت کا حجم 3.5 کھرب ڈالر سالانہ تک پہنچ چکا تھا۔ حلال خوراک کی مصنوعات کی عالمی مارکیٹ 4.8 فیصد سالانہ کی شرح سے ترقی کررہی ہے اور 2020ء تک اس کا حجم 6.4 کھرب ڈالر سالانہ تک بڑھنے کی توقع ہے۔ پاکستان پولٹری ایسوسی ایشن کے بانی چیئرمین خلیل ستار نے کہا ہے کہ سال 2011ء کے دوران مسلمان ممالک نے4.27 ارب ڈالر کا مرغی کا گوشت درآمد کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسلمان ممالک میں مرغی کے گوشت کی بڑھتی ہوئی طلب سے پاکستان بھرپور استفادہ کرسکتا ہے اور مرغی کے گوشت کی ویلیو ایڈڈ مصنوعات کی برآمدات سے سالانہ 440 ملین ڈالر کا زرمبادلہ کمایا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ویلیو ایڈیڈ مصنوعات کی تیاری کے لئے ملک میں پیدا ہونے والے مرغی کے گوشت کے صرف 10 فیصد حصہ سے استفادہ کیا جاسکتا ہے ۔

اور 80 ہزار میٹرک ٹن مرغی کے گوشت کی برآمدات سے کثیر زرمبادلہ کمایا جاسکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پولٹری کی صنعت کے فروغ کے لئے ویلیو ایڈیڈ مصنوعات کی تیاری پر توجہ کی ضرورت ہے تاکہ حلال خوراک کی تیزی سے ترقی کرتی ہوئی عالمی مارکیٹ سے حقیقی معنوں میں استفادہ کیا جاسکے جس سے نہ صرف قیمتی زرمبادلہ کے حصول میں مدد ہوگی بلکہ اس سے شعبہ کی ترقی میں بھی معاونت حاصل ہوگی اور ملکی معیشت کی ترقی کے مطلوبہ اہداف کے حصول کو یقینی بنایا جاسکے گا۔

مزید : کامرس


loading...