امریکی حکومت کی جانب سے سندھ کے ہسپتالوں میں 52 وینٹیلیٹرز کی فراہمی

امریکی حکومت کی جانب سے سندھ کے ہسپتالوں میں 52 وینٹیلیٹرز کی فراہمی
امریکی حکومت کی جانب سے سندھ کے ہسپتالوں میں 52 وینٹیلیٹرز کی فراہمی

  

کراچی (پ ر) پاکستان کی نیشنل ڈزازسٹر منیجمنٹ اتھارٹی (NDMA) کے ساتھ جاری اپنی شراکت داری کے تحت امریکی حکومت نے سندھ کے محکمہ صحت کے ساتھ مل کر یو ایس ایڈ کے ذریعے صوبے کے چھ ہسپتالوں اور سندھ ریسکیو اینڈ میڈیکل سروسز کو 52  نئے وینٹیلیٹر زفراہم کیےتاکہ کروناوائرس کےخلاف ان کے اقدامات مزید موثر بنائے جاسکیں۔ مجموعی طور پر امریکی حکومت نے NDMA کے ساتھ شراکت کرکے پاکستان میں کرونا سے نمٹنے کیلئے 200  وینٹیلیٹر فراہم کیے ہیں اور سندھ حکومت کو دیے جانے والے وینٹیلیٹر بھی اسی کوشش کا حصہ ہیں۔

اس موقعہ پر امریکی قونصل جنرل رابرٹ سلبرسٹین نے کہا کہ "ایک بااعتماد شراکت دارکی حیثیت میں امریکا کو اس بات پر فخر ہے کہ اس نے اس مشکل گھڑی میں پاکستان اور سندھ کی صوبائی حکومت کا ساتھ دیا۔ یہ وینٹیلیٹرز نسبتاَ چھوٹے سائز کے اور آسانی سے لگائے جاسکتے ہیں جو کہ کرونا کے خلاف پاکستان کی کوششوں کومزید موثر کرنےکے ساتھ محکمہ سندھ کی صلاحیتوں میں بھی اضافہ کرے گا تاکہ تشویشناک صورتحال سے دوچار مریضوں کی زندگی بچائی جاسکے۔"

قونصل جنرل سلبرسٹین نے اس پروگرام میں آن لائن شرکت کی جس میں دیگر شرکا میں صوبائی وزیر صحت سندھ ڈاکٹر عذرہ پیچوہو، سیکرٹری ڈاکٹر کاظم جتوئی اور یو ایس ایڈ کے سندھ اور بلوچستان کے ڈائریکٹر جیمز پاریز شامل تھے۔

پاکستان میں صحت کے اداروں کے ساتھ شراکت داری کرکے یو ایس ایڈ نے ڈاکٹروں اور پیرامیڈیکل اسٹاف کو یہ آلات چلانے کی تربیت بھی دی ہے تاکہ مستحق مریضوں کو بہتر طبی امدادفراہمکی جاسکے۔ اس کے ساتھ اس شراکت داری کے توسط سے ملک بھر میں لیبارٹریوں کی ٹیسٹنگ کرنے، بیماری کی مانیٹرنگ کرنے، کیس کو ٹریک کرنے، بیماریوں کو بڑھنے سے روکنے اور مریضوں کی بہتر تیمارداری کرنے کی صلاحیتوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ بہتری بھی آرہی ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -