”وزیراعظم نے واضح کر دیا ہے کہ سرعام پھانسی کا قانون نہیں بن سکتا کیونکہ ۔۔“ حکومت نے اعلان کر دیا 

”وزیراعظم نے واضح کر دیا ہے کہ سرعام پھانسی کا قانون نہیں بن سکتا کیونکہ ۔۔“ ...
”وزیراعظم نے واضح کر دیا ہے کہ سرعام پھانسی کا قانون نہیں بن سکتا کیونکہ ۔۔“ حکومت نے اعلان کر دیا 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان تحریک انصاف کی رہنما شیریں مزاری نے واضح کرتے ہوئے کہاہے کہ حکومت سر عام پھانسی کا قانون نہیں لا رہی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق شیریں مزاری کا کہناتھا کہ وزیراعظم عمران خان نے واضح کر دیاہے کہ سرعام پھانسی نہیں ہو سکتی ہے ، عمران خان نے کہا کہ عالمی معاہدوں کے باعث ایسا قانون کیسے بن سکتا ہے ۔شیریں مزاری کا کہناتھا کہ زیادتی کے کیسز کی روک تھام کیلئے اقدامات کر رہے ہیں ، زیادتی کے کیسز میں اب خاندان سمجھوتہ نہیں کر سکتے ، ریپ سینٹر بنے گا جو عدالتوں میں کیسز کو دیکھے گا ۔

یاد رہے کہ 9 ستمبر کو موٹر وے پر خاتون کے ساتھ انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا تھا جس کے بعد پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ایک مرکزی ملزم شفقت کو تو گرفتار کر لیاہے تاہم دوسرا مرکزی ملز م عابد ابھی تک فرار ہے ۔

اس واقعہ کے بعد عوام کی جانب سے یہ مطالبہ کیا جارہاتھا کہ جنسی زیادتی کے مجرموں کو سرعام پھانسی دی جانی چاہیے تاہم اب حکومت کی جانب سے اس مطالبے اپنا موقف واضح کر دیا گیاہے ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -