"جب اپوزیشن کو وہاں سے بلاوا آئے تو جوتے چھوڑ کر بھاگتے ہیں" فواد چوہدری نے حزب اختلاف کو آڑے ہاتھوں لے لیا

"جب اپوزیشن کو وہاں سے بلاوا آئے تو جوتے چھوڑ کر بھاگتے ہیں" فواد چوہدری نے ...

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم اپوزیشن کے ساتھ بیٹھنا چاہتے ہیں لیکن یہ احتساب رکوانا چاہتے ہیں، جب انہیں "وہاں" سے بلاوا آتا ہے تو جوتے چھوڑکر بھاگتے ہیں، وزیر اعظم بلائیں تو شرطیں رکھتے ہیں۔

نجی ٹی وی جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا کہ وزیر اعظم اپوزیشن کے ساتھ بیٹھنا چاہتے ہیں، مسئلہ صرف یہ ہے کہ اپوزیشن احتساب رکوانا چاہتی ہے۔ وزیر اعظم نے کہا ہے کہ اس کے علاوہ اپوزیشن کسی چیز پر بیٹھنا چاہتی ہے تو ہم تیار ہیں۔ اپوزیشن والوں کو جب "وہاں" سے بلاوا آتا ہے تو اپنے جوتے گھر پر چھوڑ کر بھاگتے ہیں اور وزیر اعظم انہیں بلاتے ہیں تو شرطیں رکھ دیتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اپنے کیسز انہیں عدالتوں میں ہی لڑنا پڑیں گے، باقی معاملات پر بات کرنے کو تیار ہیں۔ اپوزیشن کا مطالبہ ہے کہ احتساب کو چھوڑ دیں۔ ہم یہ نہیں کہتے کہ نیب کو چھوڑ دیں، بابر اعوان، علیم خان اور سبطین خان اپنے عہدوں سے مستعفی ہو کر نیب کیسز لڑ کر واپس آئے۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ نیب نے اپنا دائرہ کار بہت پھیلا دیا ہے جس کی وجہ سے نیب سے جو امیدیں تھیں وہ پوری نہیں ہوئیں، لیکن اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ احتساب کا عمل روک دیں۔ پہلے یہ بیانیہ چلتا رہا ہے کہ کھاتا ہے تو لگاتا بھی ہے لیکن اب یہ بیانیہ نہیں چل سکتا۔

مزید :

قومی -