پیپلز پارٹی پشاور نے بجلی بلوں میں انکم ٹیکس کو مسترد کردیا 

  پیپلز پارٹی پشاور نے بجلی بلوں میں انکم ٹیکس کو مسترد کردیا 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) پیپلز پارٹی ضلع پشاور کے صدر رضا اللہ خان چغر مٹی نے صدارتی آرڈیننس کے ذریعے بجلی کے بلوں میں انکم ٹیکس عائد کرنے شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ نالائق حکومت نے مہنگائی کی ستائی ہوئی عوام پر ایک اور صدارتی آرڈیننس کے ذریعے انکم ٹیکس عائد کردیا ہے پیپلزپارٹی ڈسٹرکٹ پشاور سلکیٹڈ حکومت کے امرانہ طرز عمل کے اس عوام دشمن صدارتی آرڈیننس کی شدید مذمت کرتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ غریب عوام پہلے ہی ٹیکسز، مہنگائی اوربے روزگاری کو جھیل رہے ہیں، لوگ بجلی کی لوڈشیڈنگ، گیس کے شدید بحران اور پانی قلت سے بہت پریشان ہیں پیپلزپارٹی بجلی کے بلوں میں انکم ٹیکس کے صدارتی آرڈیننس کو مسترد کرتی ہے اور حکومت کی نااہلی ناکامی ناقص کارکردگی بدانتظامی اور مہنگائی کے خلاف احتجاجی مظاہرے کا اعلان کرتے ہیں صدارتی آرڈیننس کے ذریعے بجلی بلوں میں 5 سے 35 فیصد ایڈوانس ٹیکس کا نفاذ حکومت کی عوام کے خلاف معاشی دہشت گردی ہے۔انہوں نے کہا کہ ظالم اور نالائق حکومت ملک میں خانہ جنگی کرانے پر تلی ہے۔ظلم کی حکومت کوجانا ہوگا۔بدترین مہنگائی،پٹرول میں اضافے کے بعد بجلی کی قیمت بڑھانے کا ایک اور بم عوام پر پھینکا گیا جو کسی بھی صورت قابل قبول نہیں 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -