کرم پور میں مضر صحت دودھ کی فروخت،شہریوں میں تشویش کی لہر

کرم پور میں مضر صحت دودھ کی فروخت،شہریوں میں تشویش کی لہر

  

  کرم پور (نمائندہ پاکستان) کرم پوراور گردونواح میں ناقص اجزاء سے ملاوٹ شدہ دودھ اور دہی کی فروخت(بقیہ نمبر21صفحہ5پر)

 جاری دوکاندار انسانی جانوں سے کھیلنے لگے کو ئی پرسان حال نہیں جبکہ ضلعی انتظامیہ اور پنجاب فوڈ اتھارٹی کی مبینہ خاموشی سے شہریوں میں تشویش کی لہر۔کرم پور اورگردونواح میں دکاندار انسانی جانوں سے کھیلنے لگے رات و رات امیر بننے کے چکر میں ملاوٹ شدہ کیمیکل پوڈر والا دودھ ڈرموں میں بھر کر شہر لایا جاتا ہے۔ باہر سے آنے والے ملاوٹ شدہ کیمیکل دودھ کو خالص بتا کر من پسند قیمت میں فروخت کیا جاتاہے۔اس کے علاوہ دہی کے  اوپرملائی کی تہہ بنانے کے لیے ٹشو پیپر کا استعمال کیا جا رہا ہے شہریوں محمد اشرف،غلام حسین،محمد ارشاد،محمد نوید،ساجدالرحمن،غلام یاسین،ریاض احمد،مہر وسیم،قمر زمان  نے ڈی سی وھاڑی سے ناقص دودھ دہی فروخت کرنے والے ظالم لوگو ں کیخلاف کارروائی کا مطالبہ کیا اور انتظامیہ سے خاص طور پر ڈی سی وھاڑی  سے اپیل کی ہے کہ ان ظالم ملاوٹ مافیاکو کس کر لگام ڈالی جائے اور ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے۔

لہر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -