مجرم کو سزا ئے موت، 2لاکھ جرمانہ، قتل کیس کا 12سال بعد فیصلہ 

مجرم کو سزا ئے موت، 2لاکھ جرمانہ، قتل کیس کا 12سال بعد فیصلہ 

  

 ٹھٹھہ صادق آباد(نامہ نگار)ٹھٹھہ صادق آباد کے مشہور تہرے قتل کیس کا 12 سال بعد فیصلہ سنادیا گیا مجرم کو سزائے موت 2 لاکھ جرمانے کی سزا سنا دی گئی، تفصیل کے مطابق 12 سال قبل 2009 میں ٹھٹھہ صادق آباد کے نواحی چک نمبر 140 دس آر میں مجرم ذوالفقار علی عرف بھٹو رندھاوا سمیت تین ملزمان نے ملکر فائرنگ کرتے ہوئے کبڈی کے مایہ ناز پہلوان عاشق عرف اچھی اس کے والد اور والدہ کو بے دردی سے قتل(بقیہ نمبر12صفحہ5پر)

 کردیا تھا، 12 سال تک اس مشہور تہرے قتل کا کیس چلنے کے بعد ایڈیشنل اینڈ سیشن جج خانیوال کی طرف سے گرفتار ملزم ذوالفقار علی عرف بھٹو رندھاوا کو سزائے موت اور 2 لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنادی گئی ہے جبکہ دیگر 2 نامزد ملزمان شہزاد ار عباس کی مدعی پارٹی سے پہلے ہی صلح ہوچکی ہے۔

 فیصلہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -