چین میں مسلمانوں پر زندگی تنگ

چین میں مسلمانوں پر زندگی تنگ
چین میں مسلمانوں پر زندگی تنگ

  


 سنگ کیانگ (نیوزڈیسک) ”جہاں بھی آپ کو داڑھی والا کوئی شخص نظر آئے، فوری پولیس کو اطلاع دیں اور انعام پائیں“ یہ وہ انوکھا اعلان ہے جو چینی صوبہ زن جیانگ میں حکومت کی طرف سے کیا گیا ہے۔ چینی حکام کی طرف سے داڑھی کو امن عامہ کیلئے ”ممکنہ خطرہ“ قرار دے دیا گیا ہے اور اس کے خلاف ایک باقاعدہ مہم کا آغاز کردیا گیا ہے۔ حکومت نے داڑھی والے دشمن میں یا کوئی بھی ایسا شخص جو حکومت گرانے کی باتیں کررہا ہو کی اطلاع دینے پر 50 سے 50 ہزار چینی یوان تک کے انعام کا اعلان کیا ہے۔ چین کے زن جیانگ صوبہ ملک کے مغرب میں واقعہ ہے اور اس کی سرحد وسطی ایشیاءسے ملتی ہے۔ یہاں بڑی تعداد میں یغُر نسل سے تعلق رکھنے والے مسلمان آباد ہیں، یہاں کے حکام روایتی طور پر داڑھی کی حوصلہ شکنی کرتے رہے ہیں۔ حکام کادعویٰ ہے کہ یہاں رہنے والے مسلمانوں میں ایسے لوگ شامل ہیں جو کہ چین میں علیحدگی پسندی کی تحریک کی حمایت کرتے ہیں اور امن عامہ کے مسائل پیدا کرتے رہے ہیں۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی


loading...