جسم میں معدنیات کی قلت یا کچھ اور؟گائے گوشت خوربن گئی

جسم میں معدنیات کی قلت یا کچھ اور؟گائے گوشت خوربن گئی
 جسم میں معدنیات کی قلت یا کچھ اور؟گائے گوشت خوربن گئی

  



نیروبی(خصوصی رپورٹ) کینیا کے جنوب مغربی علاقے ناکورو میں چارلس مابولیو نامی کسان نے ایک ایسی گائے پال رکھی ہے جو گھاس پھوس کے ساتھ گوشت بھی کھاتی ہے۔ چارلس مابولیو کا کہنا ہے کہ ایک روز اس نے دیکھا کہ گائے ان کی ایک بھیڑ کو زخمی کرنے کے بعد کھا رہی ہے جب کہ اگلے روز بھی فارم ہاؤس سے ایک بھیڑ غائب تھی۔مقامی زرعی افسر البرٹ کبوگی کا کہنا ہے کہ خشک موسم میں بہت سے جانوروں کوچارے سے وہ غذائی جزو نہیں مل پاتے جوعام حالات میں دستیاب ہوتے ہیں اور گائے کے گوشت کھانے کے واقعات کی بھی یہی وجہ ہوسکتی ہے۔ دوسری جانب مویشیوں کے ایک ڈاکٹر کا کہنا ہے کہ گائے کا بھیڑوں کو کھانا ایک غیرمعمولی عمل ہے اور یقینی طور پر یہ غیر معمولی صورتحال میں ہی ہوسکتا ہے، عین ممکن ہے کہ یہ سب گائے کے جسم میں اہم معدنیات کی قلت کے باعث ہورہا ہو۔واضح رہے کہ 2007 میں بھارت کی مغربی ریاست بنگال میں بھی گائے کے ایک چھوٹے سے بچے نے مرغیوں کو کھانا شروع کر دیا تھا۔ گائے گوشت خور

مزید : صفحہ آخر


loading...