اتحادِ امت دورِ حاضرکی سب سے بڑی ضرورت ہے ، لیاقت بلوچ

اتحادِ امت دورِ حاضرکی سب سے بڑی ضرورت ہے ، لیاقت بلوچ

  



 فیصل آباد(بیورورپورٹ) جماعت اسلامی کے مرکزی سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ ایک منظم عالمی سازش کے تحت مسلمانوں کو شیعہ سنی بلاک میں تقسیم کرکے امت مسلمہ کو کمزور کرنے کی کو شش کی جارہی ہے ، اتحاد امت موجودہ دور کی سب سے بڑی ضرورت ہے ، دشمن ہمارے درمیان نفرتیں پیدا کرکے ہمارے اتحاد اور یکجہتی کو توڑنا چاہتا ہے، مٹھی بھر اشرافیہ اٹھارہ کروڑ عوام کے مسائل کا ذمہ دار ہے، انہیں اقتدار کے ایوانوں میں نہیں اڈیالہ جیل میں ہوناچاہیے ۔ جماعت اسلامی ملک میں آئینی اور جمہوری طریقے سے اسلامی انقلاب پربا کرنا چاہتی ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے دھوبی گھاٹ گراؤنڈ میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام فیملی ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔کنونشن میں خواتین اور بچوں نے بھی کثیر تعداد میں شرکت کی ۔جماعت اسلامی کے ضلعی امیر سردار ظفر حسین خان، جنرل سیکرٹری غلام عباس،نائب امراء عظیم رندھاوا ، رانا وسیم ایڈووکیٹ ،شیخ مشتاق،زمان خان نیازی،اکرم کھرل اور دیگر بھی موجود تھے۔لیاقت بلوچ نے کہا کہ ملک میں دیانت دار قیادت کا فقدان ہے جب تک پاکستان کے حکمران اپنا قبلہ درست نہیں کرتے ملک میں امن قائم نہیں ہوسکتا ۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں خود کواسلامی تعلیمات کے سانچے میں ڈھالناہوگااوروالدین کوبھی اپنے بچوں کے لئے وقت نکال کرانہیں قرآن وسنت سے جوڑناہوگا۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے قومی ایکشن پلان کو پورا کرنے کی ذمہ داری پولیس کے ہاتھوں میں دے دی جو سراسر مذاق کے مترادف ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت مساجد اور مدارس کے بارے میں اپنی پالیسی پر نظر ثانی کرے۔انہوں نے کہاکہ یمن اور سعودی عرب کے تنازعہ میں باون سے زائدمسلم ممالک کے حکمران خاموش تماشائی کاکرداراداکررہے ہیں اورامت مسلمہ کوتباہی کی طرف دھکیلنے کی سازشوں کاحصہ داربن رہے ہیں،جماعت اسلامی حرمین شریفین کے تحفظ کو اپنی اولین ذمہ داری سمجھتی ہے ۔ لیاقت بلوچ

مزید : علاقائی