نواز شریف، سعد رفیق، عبدالقادر بلوچ کے حلقے دھاندلی سے ’’پاک‘‘

نواز شریف، سعد رفیق، عبدالقادر بلوچ کے حلقے دھاندلی سے ’’پاک‘‘
نواز شریف، سعد رفیق، عبدالقادر بلوچ کے حلقے دھاندلی سے ’’پاک‘‘

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) تحریک انصاف نے قومی اسمبلی کے پچاس اور صوبائی اسمبلیوں کے 27 حلقوں میں دھاندلی کے ثبوت جوڈیشل کمیشن کے سامنے پیش کردئیے ہیں۔ قومی اسمبلی کے جن 50 حلقوں میں منظم دھاندلی کے ثبوت جوڈیشل کمیشن کے سامنے پیش کئے ہیں اور ان میں وزیراعظم نواز شریف، وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق اور وفاقی وزیر سیفران لیفٹیننٹ جنرل (ر) عبدالقادر بلوچ کے حلقے شامل نہیں ہیں لیکن وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کے حلقہ این اے 52 کو اس لسٹ میں شامل کیا گیا۔ پی ٹی آئی نے الیکشن کمیشن کے سابق سیکرٹری اشتیاق احمد خان کی تقرری کے حوالے سے بھی ثبوت الیکشن کمیشن میں پیش کئے اور موقف اختیار کیا کہ اشتیاق احمد خان کی ریٹائرمنٹ کے بعد تقرری و توسیع غیر قانونی تھی اور اس میں قانونی تقاضے پورے نہیں کئے گئے تھے۔

مزید : اسلام آباد


loading...