سعودی نائب ولی عہد کو سفارتکار آپس میں کس نام سے پکارتے ہیں؟ وہ نام سامنے آگیا کہ جان کر آپ بھی مسکرا پڑیں گے

سعودی نائب ولی عہد کو سفارتکار آپس میں کس نام سے پکارتے ہیں؟ وہ نام سامنے ...
سعودی نائب ولی عہد کو سفارتکار آپس میں کس نام سے پکارتے ہیں؟ وہ نام سامنے آگیا کہ جان کر آپ بھی مسکرا پڑیں گے

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) بادشاہوں اور شہزادوں کے لئے خطابات اور القابات کا استعمال کوئی نئی بات نہیں ہے لیکن سعودی عرب کے طاقتور ولی عہد سلطنت محمد بن سلمان کے لئے غیر ملکی سفارتکار نجی گفتگو میں ایک ایسا نام استعمال کرتے ہیں کہ جو منفرد ہونے کے ساتھ دلچسپ بھی ہے۔

وزیر دفاع کے منصب پر فائز محمد بن سلمان کو بدلتے ہوئے سعودی عرب کی سمت کا تعین کرنے والی اہم ترین شخصیت قرار دیا جاتا ہے۔ دفاع سے لے کر معیشت تک ہر شعبے کو اپنی قائدانہ رہنمائی فراہم کرنے والے پرنس محمد بن سلمان کو ان کی ہمہ جہت شخصیت اور طاقت کی وجہ سے غیرملکی سفارتکاروں نے ”مسٹر سب کچھ(Mr Everything)“ کا نام دے رکھا ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق ایک مغربی سفارتکار کا کہنا تھا ”وہ یقینا بہت قابل اور بہت ذہین ہیں۔ ان کو اپنے تمام معاملات پر مکمل عبور ہے۔“ اسی طرح بلومبرگ بزنس ویک کا کہنا ہے کہ ”پرنس محمد بن سلمان غیر معمولی حد تک جفاکش اور محنتی ہیں۔ وہ روزانہ 16 گھنٹے کام کرتے ہیں اور ونسٹل چرچل کی تحریوں اور سن زو کی کتاب دی آرٹ آف وار سے متاثر ہیں۔“ شہزادہ محمد بن سلمان نے سعودی دارالحکومت میں واقع کنگ سعودی یونیورسٹی سے قانون کی تعلیم مکمل کی۔ وہ دو بیٹوں اور دو بیٹیوں کے باپ ہیں، اور سعودی امراءکی روایت کے برعکس انہوں نے صرف ایک شادی کی ہے۔

غیر ملکیوں کے لئے گرین کارڈ کب متعارف کروائے جائیں گے؟سعودی نائب ولی عہد نے اعلان کردیا‎

یمن میں جنگ کا آغاز کرنے اور سعودی عرب کو دفاعی طاقت بنانے کے عزم کی وجہ سے انہیں جارح مزاج قرار دیا جاتا ہے تو سعودی معیشت کا تیل پر انحصار ختم کرنے کے عزم کی وجہ سے انہیں معاشی اصلاح پسند بھی قرار دیا جاتا ہے۔

مزید :

عرب دنیا -