قرنطینہ سنٹرز سے شکایات آنے پر ٹی ایم اے کا ایک اہلکار نوکری سے برخاست

قرنطینہ سنٹرز سے شکایات آنے پر ٹی ایم اے کا ایک اہلکار نوکری سے برخاست

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)ضلع خیبر میں ٹوٹل 11 قرنطینہ سنٹرز ہیں جن میں رکھے گئے1501 افراد میں سے 753 کو ٹسٹس کے بعد ان کے متعلقہ اضلاع جیسے لاہور، راولپنڈی، صوابی، مردان، دیر، کرم، کرک وغیرہ کو بھیج چکے ہیں۔ ان میں سے کورونامثبت افراد کی تعداد 79 اور منفی افراد کی تعداد 649 جبکہ باقی کے رزلٹس ابھی موصول نہیں ہوئے۔ ڈپٹی کمشنر نے اسسٹنٹ کمشنر کو سخت ہدایات جاری کی ہیں کہ قرنطینہ سنٹرز میں کسی بندے کو کسی چیز کی کمی نہیں ہونی چاہیئے۔ کسی قسم کی شکایت کی صورت میں فوراً عمل درآمد کیا جائے۔ قرنطینہ سنٹر جمرود سے شکایات آنے پر ٹی ایم اے کے ایک اہلکار کو نوکری سے برخاست کرکے پابند سلاسل کر دیا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -