گندم پنجاب سے باہر لیجانے پرپابندی، بزنس کمیونٹی فوڈ کے شعبہ میں تعاون کرے: عبد العلیم خان

گندم پنجاب سے باہر لیجانے پرپابندی، بزنس کمیونٹی فوڈ کے شعبہ میں تعاون کرے: ...

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)سینئر وزیر پنجاب عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ امسال پنجاب گندم کی کٹائی میں 22دن آگے ہے،صوبے میں گندم کٹائی کا آغاز جنوبی پنجاب سے جبکہ اختتام گوجرانوالہ میں ہوتا ہے۔انہوں نے بتایا کہ گزشتہ سال گندم کٹائی2مئی کو جبکہ اس مرتبہ 10اپریل سے شروع ہے، خراب موسم کے باوجودفصل بہت اچھی ہے اور انشاء اللہ کسی قسم کے بحران کا خدشہ نہیں۔ سینئر وزیر عبدالعلیم خان نے مزید کہا کہ گندم صوبے سے باہرلیجانے پر پابندی ہے البتہ آٹا،چوکر،میدہ او ر دیگر مصنوعات پرمٹ کے ساتھ پشاوراور سندھ تک جا رہی ہیں۔اسی طرح واضح ہدایات دی جا چکی ہیں کہ پنجاب بھر میں گندم کی بین الاضلاعی ترسیل پر کوئی پابندی نہیں۔ لہذا مل مالکا ن کو غیر ضروری طور پر تنگ نہیں کیا جانا چاہیے۔اسی طرح پرمٹ کے ساتھ بین الصوبائی گندم بھی لے جائی جا سکتی ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے چیمبر آف کامرس رحیم یار خان سے مشترکہ اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کیا جہاں اراکین پنجاب اسمبلی چوہدری آصف مجید،میاں محمد شفیق اور میاں محمد شفیع بھی موجود تھے۔عبدالعلیم خان نے بزنس کمیونٹی سے اپیل کی کہ وہ خوراک کے شعبے میں آگے آئیں اور دنیا بھر میں پائے جانے والے جدید رحجانات کو پاکستان بالخصوص پنجاب میں متعارف کروائیں، حکومت اُن کی ہر ممکن سپورٹ کرے گی۔عبدالعلیم خان نے رحیم یار خان چیمبر آف کامرس کی جانب سے پیش کردہ مسائل بالخصوص فلو ر ملز کی مشکلات دور کرنے کی یقین دہانی کروائی۔

عبدالعلیم خان

مزید :

صفحہ آخر -