بداخلاقی کے مقدمات میں میڈیکل ٹیسٹ کا مروجہ طریقہ کار چیلنج

بداخلاقی کے مقدمات میں میڈیکل ٹیسٹ کا مروجہ طریقہ کار چیلنج

  

لاہور(نامہ نگار)خواتین سے بداخلاقی کے مقدمات میں میڈیکل ٹیسٹ کا مروجہ طریقہ کولاہورر ہائیکورٹ میں چیلنج کردیاگیاہے،یہ درخواست مسلم لیگ (ن)کی راہنما شائستہ پرویز ملک نے بداخلاقی کے مقدمات میں میڈیکو لیگل کے طریقہ کار کو چیلنج کیاہے،درخواست میں وفاقی و صوبائی حکومت، میڈیکو لیگل سرجن پنجاب، آئی جی پنجاب سمیت دیگر کو فریق(بقیہ نمبر16صفحہ6پر)

بنایا گیا ہے،درخواست گزار کا موقف ہے کہ جنسی تشدد اور بداخلاقی کے مقدمات میں متاثرہ خواتین اور بچیوں کا چیک اپ انتہائی بے ہودہ انداز سے کیا جاتا ہے۔ جنسی زیادتی کے مقدمات میں مروجہ میڈیکولیگل کے طریقہ کار جنسی بداخلاقی کی شکار خواتین اور بچیوں سے دوبارہ وہی مکروہ عمل دہرانے کے مترادف ہے، عدالت سے استدعاہے کہ جنسی بداخلاقی کے مقدمات میں مروجہ میڈیکولیگل طریقہ کار استعمال کرنے سے روکا اورجنسی بداخلاقی اور تشدد کے مقدمات کے لئے مروجہ میڈیکولیگل طریقہ کار میں ترمیم کرنے کا حکم دیا جائے۔ درخواست میں مزید استدعا کی گئی ہے کہ متاثرہ خاتون اور بچی کی مرضی کے خلاف مروجہ طریقہ کار کے تحت طبی معائنہ نہ کیا جائے اورمروجہ میڈیکو لیگل طریقہ کار کے تحت جنسی زیادتی کی شکار خاتون کے پیشہ ور، عادی ہونے یا نہ ہونے سے متعلق بھی رائے نہ دی جائے۔

طریقہ کار چیلنج

مزید :

ملتان صفحہ آخر -