کورونا وائرس، خلیجی ممالک میں کتنے پاکستانیوں کو نوکریوں سے فارغ کر دیا گیا ؟ زلفی بخاری نے حیران کن اعدادو شمارجاری کر دیئے

کورونا وائرس، خلیجی ممالک میں کتنے پاکستانیوں کو نوکریوں سے فارغ کر دیا گیا ...
کورونا وائرس، خلیجی ممالک میں کتنے پاکستانیوں کو نوکریوں سے فارغ کر دیا گیا ؟ زلفی بخاری نے حیران کن اعدادو شمارجاری کر دیئے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیرااعظم عمران خان کے معاون خصوصی سید ذوالفقار عباس بخاری نے کہاہے کہ خلیجی ممالک میں تقریبا 21 ہزار پاکستانیوں کی کورونا وائرس کے باعث نوکریاں چلی گئیں ہیں ۔

عرب نیوز کو خصوصی انٹر ویو دیتے ہوئے زلفی بخاری نے ان میڈیا رپورٹس کی تردید کہ صرف متحدہ عرب امارات میں کورونا وائرس کے باعث 40 ہزار سے زائد پاکستانیوں کی نوکریاں چلی گئیں اور کہا کہ کورونا وائرس کے پیش نظر سعودی عرب میں 1245 ، قطر میں 691 ، اومان میں 600 ،کویت میں 500 ، بحرین میں 387 اور عراق میں 200 افراد کو اس ہفتے تک نوکریوں سے فارغ کیا گیا ہے ۔

زلفی بخاری نے سعودی عرب کی پاکستانیوں کو تین ماہ تک نوکریوں سے نکالنے کی کمپنیوں کی ہدایات پر شکریہ ادا کیا ، ان کا کہناتھا کہ لیکن متحدہ عرب امارات میں ایسا نہیں ہے وہاں کمپنیاں ملازمین کو فارغ کر رہی ہیں یا پھر انہیں زبردستی تنخواہ کے بغیر چھٹیوں پر بھیج رہی ہیں جبکہ سعودی عرب میں ایسا نہیں ہے بلکہ وہاں پر تو مکمل تنخواہ دی جارہی ہے ۔

وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی نے بتایا کہ سعودی ڈپٹی منسٹر آف لیبر اینڈ سوشل ڈویلپمنٹ ڈاکٹر عبداللہ بن نصر سے ویڈیو کال کے دوران درخواست کی تھی سعودی عرب میں موجود پاکستانیوں کے ساتھ تعاون کیلئے اقدامات کیے جائیں ۔ڈاکٹر نصر نے مجھے بتایا کہ سعودی عرب کی جانب سے حکم نامہ جاری کر دیا گیاہے کہ سعودی کمپنیاں پاکستانی ملازمین کو اگلے تین ماہ تک فارغ نہیں کریں گی اور وہ اس تین کے دوران مکمل تنخواہ حاصل کریں گے ۔

ان کا کہناتھا کہ سعودی عرب نے داخلی اور خارجی ویزوں کی مدت میں توسیع کا بھی فیصلہ کیا ہے اور پاکستانی تارکین وطن کی دسمبر تک ویزا میں مفت توسیع کی جائے گی ۔ان کا کہناتھاکہ پاکستان واپس آنے والے تارکین وطن کی بڑی تعداد کا تعلق خلیجی ریجن سے ہے جو کہ تقریبا 90 ہزار کے قریب ہے ، اسی وجہ سے متحدہ عرب امارات کیلئے گزشتہ ہفتے 17 فلائٹس چلائی گئیں ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -