ایندھن کی طلب میں اضافہ، پٹرول اور خام تیل کی درآمد سے متعلق بڑا فیصلہ سنا دیا گیا

ایندھن کی طلب میں اضافہ، پٹرول اور خام تیل کی درآمد سے متعلق بڑا فیصلہ سنا ...
ایندھن کی طلب میں اضافہ، پٹرول اور خام تیل کی درآمد سے متعلق بڑا فیصلہ سنا دیا گیا

  

کراچی(ویب ڈیسک) وزارت توانائی نے ایک ماہ بعد ملک میں خام تیل اور پیٹرول کی درآمد پر عائد پابندی ختم کردی ہے۔ایکسپریس نیوز کے مطابق وزارت توانائی پیٹرولیم ڈویژن نے آئل کمپنیز ایڈوائزری کمیٹی کو ارسال کردہ مراسلہ میں پابندی ہٹانے سے مطلع کیا ہے۔ پابندی ختم ہونے کے بعد ریفائنریز خام تیل درآمد کرسکیں گی جب کہ مارکیٹنگ کمپنیز کو ڈیزل اور پیٹرول درآمد کرنے کی اجازت ہوگی۔

پیٹرولیم ڈویژن کے حکام کا کہنا ہے کہ ملک میں گندم کی کاشت کی وجہ سے ایندھن کی طلب میں یکم اپریل سے اضافہ ہوا ہے۔ پیٹرول اور ڈیزل کی کھپت میں بھی اضافہ ہورہا ہے۔ اس صورت حال کو پیش نظر رکھتے ہوئے پابندی ہٹانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان میں خام تیل اور پیٹرولیم مصنوعات کی درآمد پر 25 مارچ کو پابندی عائد کردی گئی تھی اور حکم نامے میں کہا گیا تھا کہ لاک ڈاﺅن کی صورت حال میں مقامی ریفائننگ انڈسٹری کے پاس تیل کی ملکی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے پٹرولیم مصنوعات کا کافی اسٹاک موجود ہے۔

مزید :

بزنس -