امام مسجد کا قاتل گرفتار، اعتراف جرم بھی کرلیا

امام مسجد کا قاتل گرفتار، اعتراف جرم بھی کرلیا
امام مسجد کا قاتل گرفتار، اعتراف جرم بھی کرلیا

  

لودھراں ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) لودھراں میں امام مسجد کے قتل کی گتھی سلجھ گئی ، پولیس نے قاتل کو گرفتار کرلیا جس نے مقتول کے اپنی بیوی کیساتھ تعلقات کا اعتراف کرلیا۔

انگریزی جریدے ایکسپریس ٹریبیون کے مطابق پولیس نے نو روز قبل نماز تراویح کی ادائیگی کے بعد گھر جاتے ہوئے فائرنگ سے قتل ہونےو الے امام مسجد کے قاتل کو ہفتے کے روز گرفتار کیا، ملزم رستم نے قتل کا عتراف کرتے ہوئے اپنے بیان میں کہا کہ مقتول خدا بخش کے اس کی بیوی کے ساتھ تعلقات تھے ، اس کی بیوی مقتول کے پاس کالے جادو کے شک میں روحانی علاج کیلئے گئی تھی اور اسی بنیاد پر بعد میں اس نے رستم سے طلاق بھی لے لی ، جس پر ملزم ذہنی تناؤ کا شکار تھا اور اس نے خدا بخش کو قتل کر دیا۔

پولیس کے مطابق دنیاپور کے قریب چک 8ایم میں 45 سالہ خدا بخش کے سر اور سینے پر فائرنگ کی گئی جس سے اس کی موقع پر ہی موت ہو گئی ۔

ڈی پی او سید کرار حسین نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی ایس پی کی زیر سربراہی قاتل کی گرفتاری کیلئے ایک ٹیم تشکیل دی تھی جس نے واقعے کے نو روز بعد ہی ملزم کو گرفتار کرلیا، ملزم واقعے کے بعد بھاگ گیا تھا جسے جدید ٹیکنالوجی کے کی مدد سے گرفتار کیاگیا۔

مزید :

قومی -جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -