جنرل کیڈر ڈاکٹر ایسوسی ایشن کا سروس سٹرکچر کے سلسلہ میں ہنگامی اجلاس

جنرل کیڈر ڈاکٹر ایسوسی ایشن کا سروس سٹرکچر کے سلسلہ میں ہنگامی اجلاس

لاہور (پ ر) جنرل کیڈر ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے صدر ڈاکٹر مسعود اختر شیخ نے سروس سٹرکچر کے سلسلے میں منعقدہ ہنگامی اجلاس میں کہا کہ 14 ہزار جنرل کیڈر ڈاکٹرز کی ترقی میں اصل رکاوٹ پروموشن کی رفتار کا بے حد سست ہونا ہے۔ ضروری ہے کہ سب سے پہلے حاضر سروس جنرل کیڈر ڈاکٹرز کو ان کی سنیارٹی اور سروس کے لحاظ سے اگر گریڈ 17 اور 18 میں مشترکہ طور پر 12 سال مکمل ہوچکے ہیں تو 19واں گریڈ اور اگر 16 سال سے زائد ہوچکا ہو تو 20 ویں سکیل میں فی الفور ترقی دے کر ماضی کی حکومتوں کے ناروا سلوک کا ازالہ کیا جائے۔ ڈاکٹر مسعود شیخ نے کہا کہ 2012ءتک نئے میڈیکل کالجوں اور ہسپتالوں میں تقریباً 900 سیٹوں کاضافہ کیا گیا جن کے تناسب سے گریڈ 18، 19 اور 20 کی سیٹوں کو ری فکس کیا جائے۔ جنرل کیڈر ڈاکٹرز میں میں 612 ڈاکٹرز کے اسسٹنٹ پروفیسر، سینئر رجسٹرار اور سپیشلسٹ کیڈر میں ترقی پانے کے بعد سے ان کے نام جنرل کیڈر سے نکال کر نئی سنیارٹی لسٹ تیار کی جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1