اتحادیوں کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ وزیراعظم پیش نہیں ہونگے، معظم جتوئی

اتحادیوں کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ وزیراعظم پیش نہیں ہونگے، معظم جتوئی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) حکومت نے وزیراعظم راجہ پرویز اشرف کے عدالت میں پیش ہونے یا نہ ہونے کے حوالے سے حکمت عملی بنا لی ہے اور کل اتحادیوں کو اعتماد میں لیا جائے گا۔ ایوان وزیراعظم میں پیپلز پارٹی کی کور کمیٹی کا اعلیٰ سطحی ہوا جس میں وزیر قانون فاروق ایچ نائیک نے وزیراعظم کو قانونی امور اور عدالتی معاملات پر بریفنگ دی۔ وفاقی وزیر نذر محمد گوندل نے کہا ہے کہ وزیراعظم کو توہین عدالت کا نوٹس نہیں ملااس لئے پہلی طلبی میں وکیل بھی پیش ہو سکتا ہے۔ دنیا نیوز کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میرے خیال میں پہلے نوٹس پر وکیل بھی پیش ہو سکتا ہے تاہم اس بارے میں اتحادیوں کے ساتھ مشاورت کے ساتھ فیصلہ کریں۔ سندھ کے وزیر اطلاعات شرجیل میمن کا کہنا ہے کہ جمہوری حکومت کو گھر بھیجنے کا فیشن ختم ہونا چاہئے۔ دریں اثناءوزیر مملکت معظم جتوئی نے کہا کہ وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف 27 اگست کو سپریم کورٹ میں پیش نہیں ہوں گے جبکہ دوسرے وزیراعظم کے خلاف بھی فیصلہ جمہوریت کے ساتھ زیادتی ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ سرائیکی صوبے کے قیام میں روڑے اٹکا رہی ہے۔

مزید : صفحہ اول