حکومت کی عدم توجہ صوبہ بھر کی پبلک لائبریریاں ویران ، طلبہ و قارئین مایوسی کا شکار

حکومت کی عدم توجہ صوبہ بھر کی پبلک لائبریریاں ویران ، طلبہ و قارئین مایوسی کا ...

                                   لاہور(ذکا ءاللہ ملک)حکومت کی عدم توجہی اور بیوروکریسی کی عدم دلچسپی کے باعث لاہور سمیت صوبہ بھر کی پبلک لائبر یریاں ویران ہو گئیںصوبائی دارالحکومت کی قدیم لائبریریوں میں کوئی موثرانتظامی ڈھانچہ ہے نہ بجلی کامتبادل انتظام جبکہ جدید ریسرچ پر مبنی کتب سمیت سٹاف کی کمی کے مسائلکتب بینی کا شوق رکھنے والوں کے لئے ذہنی اذیت کا باعث بننے لگے ہیں تفصیلات کے مطابق پبلک لائبریریوں کے انتظامی و مالی معاملات کو چلانے کے لئے سینئر بیوروکریٹس پر مشتمل کمیٹیاں قائم کی جاتی ہیں جنکا مقصد ان اداروں کی بہتر ایڈمنسٹریٹر یشن کے تحت شہریوں کے لئے علمی سہولیات کو یقینی بنایا جا سکے قائد اعظم لائبریری کی گورننگ باڈی میں 5رکنی کمیٹی تشکیل دی گئی جن میں سیکرٹری آرکائیو،سیکرٹری ہائر ایجوکیشن ،سیکرٹری سکولز ایجوکیشن،سیکرٹری انفارمیشن سمیت سیکرٹری فنانس شامل ہیں ، ذرائع کے مطابق لائبریری کے تمام معاملات کی جانچ پڑتال کےلئے موزوں وقت پر میٹنگز کا انعقاد ہونا لازم ہوتا ہے مگر مذکورہ کمیٹی کی طرف سے گزشتہ 2سال سے صرف تین میٹنگز ہوئی ہیں ،یہی وجہ ہے کہ پبلک لائبیریریاں ویران ہو چکی ہیںاور طلباءسمیت کتب بینی کا شوق رکھنے والوں کی بڑی تعداد نے ٹوٹی کرسیوں ،خستہ حال فرنیچر،کتابوں کےلئے بوسیدہ الماریوں ،پینے کے ٹھنڈے پانی کی عدم دستیابی سمیت بجلی کے متبادل انتظام کے باعث لائبریریوں میں آنا ترک کر دیا ہے جبکہ مقابلے کے امتحانات دینے والے نوجوان بھی انفارمیشن ٹیکنالوجی کے جدید دور میں ڈیجیٹل لائبیریوں کے عدم قیام اور جدید ریسرچ پر مبنی کتب کی عدم دستیابی کی وجہ سے مشکلات کا شکار ہیںذرائع کا کہنا ہے کہ لائبیریریوں کے پاس مواد کو ڈیجیٹل کرنے کےلئے کاپی رائیٹ کے حقوق بھی نہیں ہیں اسی طرح پنجاب پبلک لائبیریری میں ٹوٹ پھوٹ کا شکار فرنیچر،سٹاف کی کمی،کتب کی کمی اور قدیم کتب کی چوری جیسے سنگین مسائل پیدا ہو چکے ہیں جبکہ سکیورٹی کے نظام کو بہتر بنانے کے لئے کوئی سی سی ٹی وی کیمرہ بھی نہیں جسکے باعث لائبریری میں کتب سمیت اہم چیزوں کی چوری معمول ہے اس حوالے سے ریٹارڈ چیف لائبریرین قائد اعظم لائبریری عابد گل کا کہنا ہے قائد اعظم لائبریری کے لئے بنایا گیا بورڈ آف گورنر باقاعدگی سے میٹنگز اور اجلاس نہ ہونے کے باعث غیر موثر ہو چکا ہے جسکی وجہ سے پبلک لائبریری میں مسائل کا سامنا ہے پنجاب پبلک لائبریری کی چیف لائبریرین ازرا عثمان کا کہنا ہے کہ بجٹ میں کمی کے باعث سٹاف کی تعداد پوری نہیں ہے جبکہ سکیورٹی کے پیش نظر کیمرے بھی نہیں لگائے جا سکے جسکی درخواست حکام بالا کو کی گئی ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1