حکومت سرحدی حدود کی خلافورزی پر بھارت پر دباﺅ بڑھائے،عبدالغفار روپڑی

حکومت سرحدی حدود کی خلافورزی پر بھارت پر دباﺅ بڑھائے،عبدالغفار روپڑی

 لاہور(پ ر) جماعت اہل حدیث پاکستان کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی نے لائن آف کنٹرول پر ایک مرتبہ پھر بھارتی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ کی مذمت کی ہے انہوں نے کہا کہ بھارت دوغلی پالیسی پر کاربند ہے بھارت دہشت گردی جیسے گھناﺅنے جرم کا مرتکب ہے اور آئے روز عالمی قوانین کی دھجیاں اڑاتے ہوئے لائن آف کنٹرول پر فائرنگ کر رہا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ دارالقدس میں جماعت کے ذمہ داران کے وفد سے گفتگو کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ بھارتی بنیا ایک طرف تو خطے میں امن قائم کرنے کی باتیں کرتا ہے مگر دوسری طرف امن کو سبوتاژ کرنے میں بھی پہل کر دیتا ہے بھارت خطے میں اپنا دبدبہ قائم کرنے کےلئے اسلحہ کے ڈھیر لگا رہا ہے امن کے قیام اور مذاکرات کی فضا کو یقینی بنانے کےلئے ہتھیاروں اور اسلحہ کے ڈھیر کی نمائش نامناسب ہے انہوں نے گذشتہ شام چپراڑ سیکٹر، باجرہ گڑھی اور ہرپال سیکٹر کے دیہات میں بھارتی فوج کی اشتعال انگیز فائرنگ اور گولہ باری کی شدید الفاظ میں مذمت کی انہوں نے کہا کہ متعدد بار سرحدی حدود کی خلاف ورزی کیے جانے پر بھارت کےخلاف عالمی سطح پر دباﺅ بڑھایا جائے عالمی قوانین کی دھجیاں اڑانے والا ملک کبھی بھی امن و امان کے قیام کا خواہاں نہیں ہو سکتادریں اثناءانہوںنے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ حکومت ملک میں جاری ” فحاشی مارچ “ کو ختم کرنے کے لیے فوری اقداما ت کرے تمام سیاسی و دینی جماعتیں مل کر پاکستان کی سا لمیت اور ساکھ کو عالمی سطح پر خراب ہونے سے بچانے کے لیے اپنا کردار ادا کریں ملک میں جاری انتشار اور فسادات کی صورتحال سے فائدہ اٹھا بیرونی قوتیں پاکستان کو نقصان پہنچا سکتی ہیں۔ امریکہ، بھارت سمیت دیگر اسلام اور ملک دشمن طاقتیں پاکستان کو نقصان پہنچانے کا کوئی بھی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتیں۔ وقت کی ضرورت ہے کہ سیاستدان ذاتی مفادات کی بجائے ملک و قوم کی بہتری اور فلاح و بہبود کے لیے اتحاد کا مثالی مظاہرہ پیش کریں۔ اس موقع پر جماعت کے مرکزی رہنما مولانا عبدالوہاب روپڑی، مولانا شکیل الرحمن ناصر سمیت دیگر ذمہ داران نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1