شالیمار، قتل یا خودکشی ،گھریلوملازمہ کی موت کا معمہ حل نہ ہوسکا

شالیمار، قتل یا خودکشی ،گھریلوملازمہ کی موت کا معمہ حل نہ ہوسکا


لاہور(کرا ئم سیل ) شالیمار کے علاقہ میں تین روز قبل جاں بحق ہونے والی 2بچوں کی ماں گھریلوملازمہ کی موت کا معمہ حل نہ ہوسکا ،پولیس کسی نتیجہ پر نہیں پہنچ سکی ،تفصیلات کے مطابق تیز گاؤں جی ٹی روڈ باٹا پور کی رہائشی دو بچوں کی ماں 35سالہ فرزانہ بی بی بھو گیوال روڈ ماربل فیکٹری والی گلی کوٹ خواجہ سعید گھر میں ملازمت کرتی تھی ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب اسے دو نامعلوم شخص بے ہوشی کی حالت میں نواز شریف ہسپتال چھوڑ گئے تھے جسے بعدازاں تشویشناک میں میو ہسپتال منتقل کردیا گیا جہاں وہ دم توڑ گئی ۔ہسپتال ذرائع کے مطابق متوفیہ کی موت زہریلی چیز سے ہوئی ہے ۔پولیس نے نعش کو پوسٹمارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے کردیا جسے آبائی قبرستان میں سپردخاک کر دیا گیا ،تاہم پولیس نے فرزانہ بی بی کے بھائی رمضان کی مدعت میں مقدمہ درج کرلیا لیکن پولیس کسی نتیجہ تک پہنچنے میں کامیاب نہ ہوسکی ہے کہ خاتون کو کسی نے زہریلی چیز کھلائی ہے جس سے اس کی موت واقع ہوئی ہے یااس نے خودکشی کی ہے۔

مزید : علاقائی