برفیلے پانی کا چیلنج،غزہ متاثرین نے بھی احتجاج ریکارڈ کرا دیا

برفیلے پانی کا چیلنج،غزہ متاثرین نے بھی احتجاج ریکارڈ کرا دیا
برفیلے پانی کا چیلنج،غزہ متاثرین نے بھی احتجاج ریکارڈ کرا دیا

  

یروشلم (نیوز ڈیسک) ذہنی مریضوں کیلئے کام کرنے والے امریکی ادارے ALS نے جب چندہ اکٹھا کرنے کیلئے آئس بکٹ چیلنج کا آغاز کیا تو یہ ساری دنیا میں آناً فاناً مقبول ہوگیا اور مائیکروسافٹ کے سربراہ بل گیٹس سمیت دنیا کی مشہور ترین شخصیات نے اس میں حصہ لیا۔

اس چیلنج میں حصہ لینے والے اپنے اوپر ٹھنڈے پانی کی بالٹی انڈیلتے ہیں، کسی دوست کو بھی یہی کرنے کا چیلنج دیتے ہیں اور ALS کو چندہ دیتے ہیں۔

آگاہی پیدا کرنے کے اس دلچسپ طریقہ کو استعمال کرتے ہوئے فلسطینی نوجوانوں نے بھی ایک چیلنج کا آغاز کردیا ہے لیکن اس میں فرق یہ ہے کہ مظلوم فلسطینیوں کو چونکہ پیاس بجھانے کو بھی پانی دستیاب نہیں اس لئے وہ اپنے سروں پر ٹھنڈے پانی کی بجائے اپنے تباہ شدہ گھروں کی راکھ انڈیل رہے ہیں۔

اسے ”ڈسٹ بکٹ چیلنج“ ، ”ربل بکٹ چیلنج“ یا ”رمینز بکٹ چیلنج“ کے نام سے انٹرنیٹ عام کیا جارہا ہے اور اس میں حصہ لینے والے اپنے سر رپ راکھ انڈیل کر دنیا کو فلسطین کے سانحے سے آگاہ کررہے ہیں۔

فلسطینی صحافی ایمن العلول سے شروع ہونے والا یہ چیلنج انٹرنیٹ پر تیزی سے مقبول ہورہا ہے اور لوگ راکھ انڈیلنے کی تصاویر سماجی رابطے کی ویب سائٹوں پر بھیج رہے ہیں۔ ایمن کا کہنا ہے کہ یہ سب کا فرض ہے کہ وہ اس چیلنج میں حصہ لیں تاکہ دنیا اہل فلسطین پر ہونے والے مظالم سے آگاہ ہوسکے۔

مزید : تفریح