ڈیرہ میں کانگو وائرس کی روک تھام کیلئے سخت نگرانی شروع

ڈیرہ میں کانگو وائرس کی روک تھام کیلئے سخت نگرانی شروع

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ڈیرہ غازیخان(نمائندہ خصوصی)حکومت پنجاب کی ہدایت پر ضلع ڈیرہ غازیخا ن میں کانگو وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے سخت نگرانی شروع کر دی گئی ہے . ضلع کی چاروں مویشی منڈیوں کے علاوہ باڑوں پر خصوصی اقدامات کیے جا رہے ہیں . 20روز کے دوران 54ہزار سے زائد جانوروں پر سپرے اور ویکسی نیشن کی گئی . یہ بات ڈسٹرکٹ کوآرڈینیشن آفیسر ندیم الرحمن نے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی . انہوں نے کہاکہ شہر اور دیہات کے علاوہ ٹال پلازہ ، چیک پوسٹوں اور مویشی منڈیوں کیلئے علیحدہ (بقیہ نمبر12صفحہ12پر )
علیحدہ ٹیمیں تعینات کی گئی ہیں جو غیر معینہ مدت تک کانگو وائرس کے خلاف اقدامات کریں گی . ڈی سی او نے کہاکہ ضلع ڈیر ہ غازیخان کانگو فری ہے جسے برقرار رکھنے کیلئے اقدامات کیے جارہے ہیں . ڈسٹرکٹ آفیسر لائیو سٹاک ڈاکٹر عاطف حسیب نے بتایاکہ کانگو وائرس مویشیوں پر پلنے والے چیچڑ سے پھیلتا ہے۔ڈیرہ غازیخان ، پل قمبر ، کوٹ چھٹہ اور جت والا تونسہ کی مویشی منڈیوں ، بلوچستان اور خیبرپختونخواہ صوبوں کے سرحدی مقامات کی چیک پوسٹوں بواٹا اور ترنمن کے علاوہ ضلع کے ٹال پلازہ غازیگھاٹ ، سخی سرور ایئر پورٹ روڈ اور تونسہ شریف انڈس ہائی وے پر ٹیمیں تعینات ہیں . انہوں نے بتایاکہ خصوصی مہم کے دوران 2112لائیو سٹاک فارمرز اور 1415فارم پر 17636بڑے جانور اور 26248چھوٹے جانوروں پر خصوصی سپرے کیاگیا. 242جانوروں کاعلاج معالجہ ، 968بڑے اور 1228چھوٹے جانوروں کو ایورمیکٹن کے ٹیکے لگائے گئے اسی طرح دو چیک پوسٹس اور تین ٹال پلازہ سے گزرنے والے 1729بڑے اور 5581چھوٹے جانوروں پر سپرے اور 50مویشیوں کا علاج معالجہ کیاگیا.حفاظتی و احتیاطی تدابیر کے علاوہ آگاہی مہم بھی جاری ہے اور اب تک 24تربیتی ورکشاپ منعقد کر کے 273افراد کو تربیت دی گئی. اس دوران 213معلوماتی کتابچے تقسیم اور اہم مقامات پر 16پینافلیکس اور بینرز آویزاں کیے گئے ہیں.