ماتحت عدلیہ کے فیصلے کو برقرار رکھنا ہو تو وضاحت ضروری نہیں،سپریم کورٹ

       ماتحت عدلیہ کے فیصلے کو برقرار رکھنا ہو تو وضاحت ضروری نہیں،سپریم کورٹ

  

  اسلام آباد (این این آئی)سپریم کورٹ کے جج جسٹس منصور علی شاہ نے ماتحت عدالتوں کے فیصلوں سے متعلق حکم جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ جس مقدمے میں ماتحت عدلیہ کے فیصلے کو برقرار رکھنا ہو اس میں وضاحت کی ضرورت نہیں، سپریم کورٹ کو صرف ماتحت عدلیہ کے فیصلے کی توثیق کرنی چاہئے۔ ماتحت عدلیہ کے فیصلے میں کوئی غلطی نظر نہ آئے تو مختصر فیصلہ دینا چاہیے۔ اپنے حکم میں انہوں نے کہا کہ تفصیلی وجوہات اور دوبارہ تحقیقات کرنا غیرضروری اور عوام کے وقت کا ضیاع ہے، وقت بچا کر ان فیصلوں پر لگانا چاہیے جن سے اختلاف کیا جائے۔کوئی چیز پتھر پر لکیر نہیں ہوتی، بدلتے وقت کے ساتھ پرانے طریقہ کار بدل جاتے ہیں، بڑھتی آبادی اور پیچیدہ قانونی مسائل کا تصوراتی حل ضروری ہے۔

 وضاحت ضروری نہیں 

مزید :

صفحہ اول -