ایک مرتبہ پھرپاکستان کے قبائلی علاقے میں امریکی ڈرون حملہ ، چار افراد جاں بحق

ایک مرتبہ پھرپاکستان کے قبائلی علاقے میں امریکی ڈرون حملہ ، چار افراد جاں بحق

رات گئے ماچس گاﺅں میں جاسوس طیارے نے گھر پر دومیزائل داغے

ایک مرتبہ پھرپاکستان کے قبائلی علاقے میں امریکی ڈرون حملہ ، چار افراد جاں بحق

  



میرانشاہ (مانیٹرنگ ڈیسک) اقوام متحدہ کی قرارداد کے باوجود امریکی جاسو س طیارے نے ایک مرتبہ پاکستان کے قبائلی علاقے میں حملہ کیا ہے جس کے نتیجے میں چار افراد جاں بحق ہوگئے ہیں ۔ مقامی میڈیا کے مطابق شمالی وزیرستان کے صدرمقام میرانشاہ کے قریب قطب خیل کے گاﺅں ماچس میں امریکی ڈرون طیارے نے رات گئے ایک گھر پر دو میزائل داغے جن کے نتیجے میں گھر تباہ اور وہاں موجود چار افراد مارے گئے ہیں ۔حملے کے بعد بھی علاقے میں جاسوس طیاروں کی پروازیں جاری رہیں جس کی وجہ سے علاقے میں خوف وہراس پھیل گیا اور امدادی کارروائیوں میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ یاد رہے کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں پاکستان اور ہم خیال ممالک کی طرف سے ڈرون حملوں کے خلاف پیش کی گئی قرارداد متفقہ طور پر منظور کرلی گئی تھی جس میں کہاگیاتھاکہ ڈرون حملے سلامتی اور خود مختاری کے منافی ہیں جبکہ حملوں سے دہشتگردی میں مزید اضافہ ہورہاہے ۔دوسری طرف اِنہیں ڈرون حملوں کے خلاف احتجاج کے طورپر تحریک انصاف نے خیبرپختونخواہ سے اتحادی افواج کی رسد بند کررکھی ہے ۔

مزید : وزیرستان /Headlines


loading...