آئی جی ایف سی میجرجنرل شاہد اعجاز سپریم کورٹ میں پیش ہوکر توہین عدالت کیس سے بچ نکلے

آئی جی ایف سی میجرجنرل شاہد اعجاز سپریم کورٹ میں پیش ہوکر توہین عدالت کیس سے ...
آئی جی ایف سی میجرجنرل شاہد اعجاز سپریم کورٹ میں پیش ہوکر توہین عدالت کیس سے بچ نکلے

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) توہین عدالت کیس میں آئی جی ایف سی بلوچستان میجر جنرل اعجاز شاہد عدالت میں پیشی کے بعدسپریم کورٹ نے توہین عدالت کا نوٹس واپس لے لیا۔آئی جی ایف سی توہین عدالت کیس کی سماعت جسٹس ناصر الملک کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کی۔ سماعت کے دوران آئی جی ایف سی کے وکیل عرفان قادر نے عدالت کو بتایا کہ آئی جی ایف سی اعجاز شاہد بیماری کے باعث 5 دسمبر کو پیش نہیں ہو سکے تھے لیکن آج وہ کمرہ عدالت میں موجود ہیں جس پر عدالت نے توہین عدالت کا نوٹس واپس لے لیا۔ سپریم کورٹ کا کہنا تھا کہ آئی جی ایف سی عدالت میں پیش ہوگئے لہٰذا اب توہین کا کیس نہیں بنتا اور توہین عدالت کا نوٹس واپس لیاجاتاہے۔آئی جی ایف سی نے عدالت کو بتایا کہ لوگوں کو اغوا کرنے کے ایف سی پر الزامات ہیں۔عدالت نے استفسار کیا کہ پھر ایف سی نے کیا کارروائی کی جس پر وکیل نے بتایاکہ ایک لاپتہ شخص کاو¿ خان کا سراغ مل گیا ہے، ایف سی کے جن چھ افراد کے خلاف الزام تھا وہ غلط ثابت ہوا۔ لاپتہ افراد کے حوالے سے رپورٹ رجسٹرار آفس میں جمع کرادی جائے گی جس کے بعد عدالت نے مزید سماعت15جنوری تک ملتوی کردی ۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے لاپتہ افراد کیس کی سماعت کے دوران متعدد بار آئی جی ایف سی بلوچستان میجر جنرل اعجاز شاہد کو طلب کرنے کے باوجود پیش نہ ہونے پر 5 دسمبر کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا تھا۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں


loading...