نفاذ شریعت کے لیے جدوجہد کی ضرورت ہے،لیاقت بلوچ

نفاذ شریعت کے لیے جدوجہد کی ضرورت ہے،لیاقت بلوچ

  

حسن ابدال(تحصیل رپورٹر)پنجاب بدلے گا تو پاکستان بدلے گا۔ نفاذ شریعت کے لیے جدوجہد کی ضرورت ہے۔عالم کفر مخصوص ایجنڈے کے ذریعے پاکستان کو تباہ کرنا چاہتا ہے مگر وہ اس میں کسی صورت کامیاب نہیں ہو سکتے۔پاکستان جس مقصد کے لیے بنایا گیا تھا آج تک وہ منزل پائی نہیں جا سکی۔پاکستان کی ترقی اللہ کے دین کی سربلندی سے وابستہ ہے جس کے لیے جماعت اسلامی کوشاں ہے۔ان خیالات کا اظہار سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ نے برہان میں سابق ضلعی امیر جماعت اسلامی اٹک برکت خان مرحوم کی یاد میں منعقدہ تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر امیر جماعت اسلامی ضلع اٹک مولانا جابر علی خان۔سابق ضلعی امیر و امیدوار حلقہ پی پی 17اقبال خان۔سابق امیدوار حلقہ این اے 59سردار محمد امجد خان ۔واجد علی خان ایڈووکیٹ سمیت جماعت اسلامی کی مقامی قیادت اور کارکنوں کی ایک بڑی تعداد موجود تھی۔خطاب میں لیاقت بلوچ نے کہا کہ جماعت اسلامی نے ہمیشہ اللہ کے قانون کی حکمرانی کی جدوجہد کی ہے۔مولانا مودودی نے اپنی تحریروں کے ذریعے عوام کے دل تبدیل کیے اور انہیں سیدھے راستے پر گامزن کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس ملک میں کبھی عدلیہ بحالی تحریک ہوئی تو کبھی جمہوریت کی بحالی کی تحریک شروع کی گئی ۔مگر اب وقت آ گیا ہے کہ نفاذ شریعت کی جدوجہد تیز کی جائے۔انہوں نے کہا کہ عالمی دنیا ایک مخصوص ایجنڈے پر کام کر رہی ہے جس کا مقصد پاکستان کو ناکام ریاست بنانا ہے۔ہمارے علمائے کرام کے حوالے سے منفی پروپیگنڈہ کیا جاتا ہے مگر علماء نے باہمی یکجہتی کے ذریعے اکھٹے چلنے کا ایک ضابطہ اخلاق دیا ۔کے پی کے میں علمائے کرام کی اہمیت ہے کیونکہ وہاں انہوں نے سرداروں اور خانوں کے مقابلے میں اللہ کے دین کو تھامے رکھا ۔انہوں نے کہا کہ پنجاب کے فیصلوں کا اثر ملکی سطح پر نظر آتا ہے اس لیے ہمارا ماننا ہے کہ پنجاب بدلے گا تو پاکستان بدلے گا۔ انہوں نے کہا کہ آج عالم کفر ایک جانب ہمیں ختم کرنے کی کوششوں میں مصروف ہے تو دوسری جانب کشمیر میں ظلم کا بازار گرم کر رکھا ہے ۔آج بیت المقدس پر بھی حملہ کیا گیا ہے مگر اس موقع پر پاکستان کو عالم اسلام میں ایک رول ماڈل کا کردار ادا کرنا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ سیکولر طبقہ آئے روز ہمارے ایمان پر حملہ آور ہوتا ہے ہمیں دین پر وار کی ہر کوشش کے سامنے کھڑا ہونا ہو گا کیونکہ پاکستان کی ترقی کا دارومدار اللہ دین کی سر بلندی میں پنہاں ہے۔لیاقت بلوچ نے سابقہ امیر جماعت اسلامی اٹک برکت علی خان کی وفات کو جماعت اسلامی کے لیے عظیم نقصان قرار دیتے ہوئے ان کے سفر آخرت کے لیے دعا کی جبکہ لواحقین سے دلی دکھ اور ہمدردی کا اظہار کیا۔ دیگرمقررین نے بھی مرحوم کی زندگی پر روشنی ڈالتے ہوئے ان کی یادیں تازہ کیں جبکہ مرحوم برکت علی خان کے فرزند معروف قانون دان واجد علی خان ایڈووکیٹ نے اس موقع پر اپنے والد کے مشن کو آگے بڑھانے کے عذم کا اظہار کرتے ہوئے شرکاء کا شکریہ ادا کیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -