ہمسایہ ممالک کے درمیان سہ فریقی نظام افغانستان میں دیر پا امن کے قیام میں معاون ثابت ہوگا: خواجہ آصف

ہمسایہ ممالک کے درمیان سہ فریقی نظام افغانستان میں دیر پا امن کے قیام میں ...
ہمسایہ ممالک کے درمیان سہ فریقی نظام افغانستان میں دیر پا امن کے قیام میں معاون ثابت ہوگا: خواجہ آصف

  

بیجنگ (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ پاکستان، چین اور افغانستان کے مابین سہ فریقی نظام کے قیام سے دوطرفہ تعلقات کے استحکام، اختلافات دور کرنے اور ٹھوس نتائج کے حصول کیلئے مربوط کاوش بروئے کار لائی جائے گی، یہ فورم افغانستان میں پائیدار امن کے قیام اور تینوں ممالک کے مابین تعاون بڑھانے میں بہت معاون ثابت ہوگا۔

بھارت کو افغانستان سے ٹرانزٹ ٹریڈ کے لیے پاکستانی سرزمین استعمال کرنے کی اجازت نہیں دیں گے:سرتاج عزیز

پاک چین افغان وزرائے خارجہ کے پہلے ڈائیلاگ میں شرکت کے بعد چینی وزیر خارجہ وانگ ژی اور افغان وزیر خارجہ صلاح الدین ربانی کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ معیشت، سکیورٹی، انسداد دہشتگردی اور مواصلاتی منصوبہ جات کے شعبوں میں تعاون تینوں ممالک میں امن، استحکام، اقتصادی خوشحالی اور ترقی میں معاون ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ پاک چین اقتصادی راہداری ”ایک پٹی ایک شاہراہ“ اقدام کا فلیگ شپ منصوبہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک منصوبہ جات پر کامیاب عملدرآمد سے مواصلاتی روابط بڑھانے اور افغانستان، ایران اور وسطی و مغربی ایشیائت ہمسایہ ممالک میں ایسے ہی منصوبہ جات کے ذریعے تعاون کیلئے ایک ماڈل ثابت ہوگا۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید :

قومی -