زرعی مشینری کا حصول‘ 15جنوری تک درخواستیں طلب

زرعی مشینری کا حصول‘ 15جنوری تک درخواستیں طلب

  



راولپنڈی (اے پی پی) وزیراعظم کے زرعی ایمرجنسی پروگرام کے تحت گندم کی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ کیلئے کاشتکاروں کو زیرو ٹیلج ڈرل، ہیپی سیڈرز، ڈرائی سوئنگ ڈرل، شیلو ڈرل، وتر سوئنگ ڈرل، ربیع ڈرل، ویٹ بیڈ پلانٹر اور شیلرز کی رعایتی قیمت پر فراہمی کیلئے محکمہ زراعت پنجاب نے درخواستیں طلب کر لی ہیں۔ اس ضمن میں ایسے کاشتکار/ مزارع/ ٹھیکیدار جو 12.5 ایکڑ تک زمین اور کم از کم 50 ہارس پاور ٹریکٹر کا مالک ہو درخواست دینے کا اہل ہوگا۔ترجمان نے اے پی پی کو بتایاکہ  زرعی رقبہ کی مشترکہ ملکیت کی صورت میں خاندان کا صرف ایک فرد سبسڈی سکیم کیلئے اہل ہوگا۔ درخواست گزار ایک یا ایک سے زائد زرعی آلات یا مشینری کیلئے درخواست دے سکتا ہے۔ اس سکیم کے تحت کاشتکار کو حاصل کردہ زرعی آلات/ مشینری 3 سال تک دوسرے کاشتکاروں کو کرایہ پردینے کی پابندی ہوگی۔ قرعہ اندازی میں نام نکلنے کی صورت میں 15 یوم کے اندر منظور کردہ فرم سے مجوزہ زرعی آلات یا مشینری کی بکنگ کروانا ہوگی۔ زرعی آلات/ مشینری کی آلاٹمنٹ کے متعلق الاٹمنٹ کمیٹی/ ناظم اعلیٰ زراعت (توسیع) کا فیصلہ حتمی ہوگا۔ کاشتکار کو شناختی کارڈ، ٹریکٹر کی رجسٹریشن بک، زرعی رقبہ اور فرد ملکیت کی تصدیق شدہ کاپی اور 100 روپے کے اشٹام پیپر پر بیان حلفی درخواست کے ساتھ جمع کروانا ہوگا۔ مکمل درخواستیں متعلقہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت (توسیع) کے دفتر میں 15 جنوری 2020 تک وصول کی جائیں گی۔ مزید معلومات کیلئے کاشتکار متعلقہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر کے دفتر میں دفتری اوقات میں رابطہ کر سکتے ہیں۔

مزید : کامرس