سٹی ٹریفک پشاور کی جانب سے خلاف ورزی پر 6 ہزار 331 افراد کا چالان

سٹی ٹریفک پشاور کی جانب سے خلاف ورزی پر 6 ہزار 331 افراد کا چالان

  



پشاور (کرا ئمز رپورٹر)سٹی ٹریفک پولیس پشاور نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر 6 ہزار 331افراد کوچالان کیا۔ تفصیلات کے مطابق کمشنر پشاور ڈویژن اور سی سی پی او پشاور محمدعلی گنڈاپور کی زیر صدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ سکول وین / سوزوکی وغیرہ میں گیس سلینڈر کٹ کے استعمال‘ فینسی و جعلی نمبر پلیٹس‘ غیر قانونی اڈہ جات و کارپارکنگ‘ روڈ پر غیر قانونی ٹیکس وصولی‘ بغیر پرمٹ رکشہ و چنگچیوں‘ بغیر پرمٹ ٹیکسی گاڑیوں‘ غیر قانونی طور پر پولیس لائٹ‘ بتی‘ سائرن وغیرہ استعمال کرنے والوں کے خلاف کارروائی کرنے کی ہدایت کی گئی تھی جس پر قائمقام ایس ایس پی ٹریفک وسیم احمد خلیل کی ہدایت پر ایس پی کینٹ اسلم نواز اور ایس پی سٹی صاحبزادہ سجاد خان کی نگرانی میں پشاور بھر میں کارروائیاں شروع کردی گئی ہیں جس کے تحت پہلے ہفتے میں سٹی ٹریفک پولیس کی جانب سے گیس سلینڈر کے استعمال پر 167‘ فینسی و جعلی نمبر پلیٹ استعمال کرنے پر 1225 گاڑیوں کے مالکان‘ 3802 موٹر سائیکل مالکان‘ 423 غیر قانونی اڈہ جات و پارکنگ مالکان‘ غیر قانونی طور پر ٹیکس وصولی پر 1 شخص‘ بغیر پرمٹ رکشہ و چنگچیاں چلانے پر 396 مالکان اور بغیر پرمٹ ٹیکسی چلانے پر 310 گاڑیوں کے مالکان‘ غیر قانونی طور پر پولیس لائٹ‘ بتی و سائرن استعمال کرنے پر 7 افراد کیخلاف کارروائی عمل میں لائی گئی ہے۔ قائمقام ایس ایس پی ٹریفک نے سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ٹریفک کی روانی یقینی بنانے کے لئے تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی کارروائیاں بدستور جاری رہیں گی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر