ملکی صورتحال ابتر، پی ٹی آئی حکومت چند دنوں کی مہمان، جمشید خان دستی

ملکی صورتحال ابتر، پی ٹی آئی حکومت چند دنوں کی مہمان، جمشید خان دستی

  



ماہڑہ شہر (نمائندہ پاکستان) پاکستان عوامی راج پارٹی کے سربراہ جمشید احمد خان دستی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی گورنمنٹ کی پالیسیاں عوام دشمن اور ملک بیچنے کے مترادف ہیں FPA کی مد میں عوام پر بجلی کے بلوں کا اضافی ٹیکس عوام کا خون چوسنے کے برابر ہے انہوں نے کہا کہ کوالا لمپور سمٹ کانفرنس میں وزیر اعظم عمران خان کا حصہ نہ لینا سمجھ سے بالا تر ہے انہوں نے کہا کہ مسلم ممالک کو گروپ بندی کی نہیں اتحاد کی ضرورت ہے انہوں نے کہا کہ ادویات(بقیہ نمبر32صفحہ12پر)

کی قیمتوں میں 15 فیصد کمی کا اعلان تو خوشی سے کیا گیا لیکن اس پر عمل درآمد کب ہوگا? ان کا کہنا ہے کہ اسمبلیوں میں بیٹھے پی ٹی آئی کے ممبر قومی و صوبائی اسمبلی صرف اور صرف کرپشن کے مقصد کیلئے بیٹھے ہیں عوام کے حقوق کی کوئی بات نہیں کرتا انہوں نے کہا کہ کہاں گئے اب صوبہ محاذ والے جب پی ٹی آئی گورنمنٹ نے صوبہ کے نہ بننے کا اعلان کیا تب ان لوگوں استعفی دے دینا چاہیے تھا اب یہ خواہ مخواہ اسی لیے اسمبلی میں بیٹھے ہیں کہ بقیہ گورنمنٹ کا عرصہ عیاشی سے گزاریں ان کا کہنا ہے پی ٹی آئی گورنمنٹ نے سرائیکی صوبہ بنانے کا صرف لالی پاپ دیا ہے اگر گورنمنٹ کے یہ لوگ سرائیکی صوبہ کیلئے مخلص ہوتے تو کب کا صوبہ بن گیا ہوتا انہوں نے کہا کہ میرے ملک کا غریب مر چکا ملک کی بہت ابتر صورتحال ہوچکی ملک میں مہنگائی نے سابقہ تمام گورنمنٹ کے ریکارڈ توڑ ڈالے ان کا کہنا ہے پی ٹی آئی گورنمنٹ میں پورے ملک میں جاگیردارنہ, ذمیندرارانہ نظام رائج ہے تھانہ کچہری کی سیاست کو فروغ حاصل ہے انہوں نے کہا کہ میں اپنے غریب مزدور طبقہ کے ساتھ کھڑا ہوں اگر میری غریب عوام پر ظلم و زیادتی کرے تو سوچ سمجھ کر کرے انہوں نے کہا کہ میری عوامی سہولیات کیلئے چلنے والی فری بسیں تھانوں نیں بند کر کے انتقامی سیاست کو فروغ دیا گیا ان کا کہنا کہ پی ٹی آئی حکومت چند دنوں کی مہمان ہے۔

جمشید دستی

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...